پاکستان پیپلز پارٹی اور پیپلز یوتھ آرگنائزیشن کے زیر اہتمام پی پی پی کی گولڈن جوبلی پر تقریب, بیشترپاکستانی سیاسی جماعتوں کے نمائندوں کی شرکت

پاکستان پیپلز پارٹی اور پیپلز یوتھ آرگنائزیشن کے زیر اہتمام پی پی پی کی ...
 پاکستان پیپلز پارٹی اور پیپلز یوتھ آرگنائزیشن کے زیر اہتمام پی پی پی کی گولڈن جوبلی پر تقریب, بیشترپاکستانی سیاسی جماعتوں کے نمائندوں کی شرکت

  

جدہ (محمد اکرم اسد) پاکستان پیپلز پارٹی اور پیپلز یوتھ آرگنائزیشن کے زیر اہتمام پی پی پی کی گولڈن جوبلی پر ایک پروقار تقریب کا اہتمام کیا جس میں پی پی پی اور دیگر جماعتوں جن میں جماعت اسلامی۔اے این ۔پی۔پاکستان مسلم لیگ ن ۔مسلم لیگ ق۔ بزنس کمیونٹی ۔کشمیر کمیٹی ۔کے نمائندوں نے بھر پور تعداد میں شرکت کی۔تقریب کے مہمان خصوصی صدر پی پی ریاض حسین بخاری نے اپنے خطاب میں ذوالفقار علی بھٹو کو زبردست خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے پی پی پی کی جمہوری جدوجہد پر روشنی ڈالی ۔انہوں نے کہا کہ یہ وہ جماعت ہے جس نے عام آدمی کو اپنے حق کے لیئے آواز اٹھانے، ووٹ کا حق دلانے اور عام آدمی کی فلاح و بہبود کے لیئے جدوجہد کی۔ ملک کی ترقی، خوشحالی کے لیئے اپنے دور حکومت میں بے شمار عملی اقدامات کیے۔ آج پارٹی کی قیادت نوجوان بلاول بھٹو کے ہاتھ میں ہے جو اسکو ماڈرن دور کے تقاضوں کو مدنظر رکھتے ہوئے آگے لیجائیں گے۔ تقریب کی صدارت ملک جاوید حسن نے کرتے ہوئے شہید بے نظیر بھٹو ۔کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے بلاول بھٹو اور آصف علی ذرداری کے سیاسی بصیرت کو سلام پیش کیا اور وطن عزیز میں جمہوریت کے استحکام کی چاروں صوبوں میں عوام کیلئے اپنی قربانیاں دے رہے ہیں وہ د ن دور نہیں جب ایک مرتبہ پھر حکومت میں آکر عوام کی خدمت کرینگے ، مہمان اعزازی پی پی پی مڈل ایسٹ کے چیف کوآرڈینیٹر اور صحافی اسد اکرم نے کہا کہ ملک نہ صرف اندرونی بلکہ بیرونی طور پر بھی کمزور ہے ملک کو بیرونی دنیا میں عزت کیلئے صرف پی پی پی کی قیادت ہی کام کرسکتی ہے وہ ذولفقار علی بھٹو ہی تھے جنہوں نے پہلی اسلامی کانفرنس منعقد کرکے تمام اسلامی دنیا کو متحد کیا اور قوم کو جمہوریت اور سیاست آگاہی دلائی۔ اور آج جو ملک میں جمہوریت ہے اور دن بدن مضبوط ہو رہی ہے۔ اسد اکرم نے کہا کہ آج ملک کی سرحدیں بھی محفوظ ہیں جو بھٹو شہید اور پیپلز پارٹی کا بڑا کارنامہ ہے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے اے این پی کے صدر نوشیرواں خٹک نے کہا کہ چالیس سال قبل ذوالفقار علی بھٹو نے کہا تھا جعلی مولوی اور اسٹیبلشمنٹ کا اتحاد اس ملک کیلئے نقصان دہ ہے اور یہ سلسلہ آج تک جاری ہے۔چیف آرگنائزر تصور چوہدری نے کہا کہ عوام آج بھی پی پی کے ساتھ ہیں اور آئندہ حکومت پی پی ہی بنائے گی۔ پی وائی آؤ کے صدر خالد گجر نے کہا کہ کشمیر ی شہید بھٹو کے مشکور ہیں کہ انہوں نے نہ صرف کشمیر کے مسئلے کو پہلی دفعہ اقوام متحدہ میں اٹھایا بلکہ آج تک پارٹی کشمیر کاذ کو آگے بڑھا رہی ہے۔ تقریب سے صحافی مسرت خلیل نے خطاب میں گولڈن جوبلی کی مبارکباد دیتے ہوئے کہا کی یہ وہ جماعت ہے جس نے عام جو شعور دیا۔کلیم خان نے نظامت کرتے ہوئ کہا کہ آج پھر پی پی کے جیالے دنیا بھر میں متحرک ہو چکے ہیں ، وہ اپنے شعروں سے حاضرین کا خون گرماتے رہے۔ تقریب سے سردار اعجاز، افتخار سراج اور غلام مرتضیٰ نے بھی خطاب کیآ۔تقریب میں عشائیہ سے قبل پی پی پی کی پچاسویں سالگرہ کا کیک بھی کاٹا گیا۔ تقریب میں مسلم لیگ ن کے ملک حمایت علی، چوہدری محمد اعظم ، ق لیگ کے چوہدری محمد افضل جٹ، جماعت اسلامی سے انجینئر الطاف ، کشمیر کمیٹی کے راجہ زرین خان اور دوسری جمعاعتوں کے اراکین نے شرکت کی۔ تقریب میں معروف مقامی شعراء آفتاب ترابی اور زمرد خان سیفی نے گولڈن جوبلی کے حوالے سے اپنا تازہ کالام سنا کر خوب داد وصول کی۔

 

مزید : عرب دنیا