ان ہاؤس تبدیلی ضروری،پاکستان کی تاریخ میں عمران جتنا جھوٹا وزیر اعظم نہیں دیکھا ہم پر جھوٹے مقدمات بنا کر زہر اگلا،اس حکومت سے جتنی جلدی جان چھڑالی جائے ملک کیلئے بہتر ہو گا:شہباز شریف

ان ہاؤس تبدیلی ضروری،پاکستان کی تاریخ میں عمران جتنا جھوٹا وزیر اعظم نہیں ...

  

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان یوٹرن کے ماسٹر ہیں،پاکستان کی 71سالہ تاریخ میں اتنا جھوٹا وزیراعظم نہیں دیکھا، عمران خان احسان فراموش اور غصے سے بھرا انسان ہے، ہم پرجھوٹے مقدمات بنا کر زہر اگلا گیا جبکہ عمران خان نے اپوزیشن کو دیوار سے لگا دیا ہے، ڈیڑھ سال میں ملک کا بیڑاغرق کر دیا ہے،عمران خان  نے پاکستان کی معیشت کو تباہ کر دیا ہے،  ملک مزید اس حکومت کا متحمل نہیں ہو سکتا ہے اور جلد ان ہاؤس تبدیلی لائی جائے، اس سے قوم کی بہتری ہو سکتی ہے، عمران خان کا چیمبر خالی ہے کوئی بات نہیں سمجھتے ہیں۔بدھ کو پریس کانفرنس کرتے ہوئے صدر مسلم لیگ (ن) شہباز شریف نے کہا کہ کچھ دنوں سے مسلم لیگ ن کے خلاف عمران خان نیازی نے جو گفتگو کی ہے اس سے احتیاط کروں گا اور سپریم کورٹ میں آشیانہ ہاؤسنگ سکیم کے حوالے سے جو سماعت ہوئی ہے اور اس کے بعد نیب اور عمران خان نیازی کے گٹھ جوڑ نے میرے اثاثے منجمند کرنے کی خبریں آناًفاناً چلائیں۔ انہوں نے کہا کہ 100دن سے زائد ہو گئے ہیں اور مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نافذ ہے، مقبوضہ وادی میں ظلم، زیادتی اور بربریت کا راج ہے،مودی حکومت نے جوانسانیت سوز سلوک کئے ہیں، بھارتی فوج  کشمیریوں کو شہید کر رہی ہے اور عورتوں کے آنچل دن بدن پھٹ رہے ہیں جبکہ اس پر پوری دنیا خاموش ہے اور میں سمجھتا ہوں کہ مہذب دنیا کے ضمیر کے جاگنے کا وقت آگیا ہے، میں سمجھتا ہوں کہ پوری پاکستانی قوم کے ایک ہونے کا موقع آ گیا ہے  لیکن حکومت نے یکجہتی کو خراب کرنے کی کوشش کی ہے جبکہ میں یہ بھی سمجھتا ہوں کہ ہم ایک قوم کی طرح ہو سکتے ہیں۔شہباز شریف نے کہا کہ عدالت عظمی نے ہمیں سرخرو کیا اور نیب کی بجائے نعیم بخاری نے عدالت میں کیس کی پیروی کی،14 فروری 2019کو بھی عدالت عالیہ نے دونوں کیسز میں ضمانت دی تھی اور اب پھر سے نیازی اور نیب گٹھ جوڑ ناکام ہوا ہے جبکہ نواز شریف کی بھی بے گناہی سامنے آتی رہے گی، آشیانہ کیس میں بھی دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو گیا ہے، مجھے صاف پانی کیس میں بلایا گیا اور آشیانہ میں گرفتار کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان یوٹرن کے ماسٹر ہیں اور پاکستان کی 71سالہ تاریخ میں اتنا جھوٹا وزیراعظم نہیں دیکھا، عمران خان احسان فراموش اور غصے سے بھرا انسان ہے، ہم پرجھوٹے مقدمات بنا کر زہر اگلا گیا جبکہ عمران خان نے اپوزیشن کو دیوار سے لگا دیا ہے، ڈیڑھ سال میں ملک کا بیڑاغرق کر دیا ہے۔شہباز شریف نے کہا کہ 2014سے 2018تک ملک میں ترقی او خوشحالی کے منصوبے لگے،2014سے قبل 2020گھنٹے کی لوڈشیڈنگ ہوتی تھی، یہ ایک بہت بڑا چیلنج تھا جسے نواز شریف نے قبول کیا، نواز شریف نے 11ہزار میگاواٹ بجلی کے منصوبے  مکمل کئے، ہم نے اورنج لائن منصوبے میں 70ارب روپے بچائے، اپنے وسائل سے 5ہزار میگاواٹ بجلی کے منصوبے شروع کئے،بجلی کے منصوبے دنیا کے سب سے سستے منصوبے تھے اور بجلی کے منصوبے تخمینے سے آدھی قیمت پر لگائے گئے، نواز شریف نے پاکستان کو ایٹمی ملک بنایا اور بل کلنٹن کے 5ارب کی آفر کو ٹھکرا دیا، ملتان میٹرو سے متعلق شور مچایا گیا لیکن کچھ ثابت نہیں ہوا، صاف پانی، لیپ ٹاپ اسکیم میں کرپشن کے الزامات لگائے گئے، تحریک انصاف کسی بھی کیس میں ایک دھیلے کی کرپشن ثابت نہیں کر سکی، تحریک انصاف حکومت نے انہیں مشیر بنالیا جنہوں نے کرپشن کی جبکہ پی ٹی آئی کی حکومت سے اتنا عرصہ گزر جانے کے باوجود پشاور بی آر ٹی منصوبہ مکمل نہیں ہوپارہا ہے اور بی آر ٹی میں ابھی تکتوڑ پھوڑ چل رہی ہے اور100ارب روپے سے زائد کی رقم بھی خرچ کر دی ہے۔ شہباز شریف نے کہا کہ نیب کے اقدامات سے ہر پاکستانی رنجیدہ ہے، مسلم لیگ کے لوگوں نے جیلیں کاٹیں، نیب کے عقوبت خانوں میں رسوائی ہوئی لیکن اب نواز شریف اور ان کی ٹیم کی بے گناہی سامنے آرہی ہے جبکہ آج ملک میں غربت بے روزگاری اور مہنگائی کی ذمہ دار موجودہ حکومت ہے،50لاکھ گھر بنانے کا وعدہ کرنے والوں نے ڈیڑھ سال میں ایک گھر تک نہیں بنایا  اور ایک اینٹ تک نہیں لگائی۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان  نے پاکستان کی معیشت کو تباہ کر دیا ہے، جس کے بعد ملک مزید اس حکومت کا متحمل نہیں ہو سکتا ہے اور جلد ان ہاؤس تبدیلی لائی جائے، اس سے قوم کی بہتری ہو سکتی ہے، عمران خان کا دماغ خالی ہے کوئی بات نہیں سمجھتے ہیں۔ دریں اثنامسلم لیگ (ن) کے صدر میاں شہباز شریف نے اہم ملکی اور سیاسی معاملات پر اعلی سطح کی مشاورت کیلئے پارٹی کے اہم رہنماؤں کو لندن طلب کر لیا ہے۔ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن کے مرکزی سیکرٹری جنرل احسن اقبال، ترجمان مریم اورنگزیب، قومی اسمبلی میں پارلیمانی لیڈر خواجہ آصف، رانا تنویر اور سابق سپیکر سردار ایاز صادق کو بھی لندن بلا لیا گیا ہے۔ پارٹی رہنما نواز شریف کی تیمارداری بھی کریں گے۔اجلاس میں آرمی چیف کی مدت ملازمت کے حوالے سے قانون سازی پر بھی بات چیت ہوگی جبکہ چیف الیکشن کمشنر کی تقرری کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ ذرائع کے مطاب لیگی رہنماؤں کے اجلاس میں شہباز شریف اور فیملی کے اثاثے منجمد کرنے کے معاملات بھی مشاورت میں زیر غور آئیں گے۔دوسری جانب اسلام آباد میں پاکستان مسلم لیگ ن کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس ہوا جس میں آرمی چیف کی مدت ملازمت پر قانون سازی سے متعلق مشاورت کی گئی۔ اجلاس میں لیگی وفد کو لندن بھجوانے کا فیصلہ کیا گیا۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کا پارلیمانی وفد(آج) جمعرات کو لندن روانہ ہو گا،وفد نواز شریف کی عیادت اور انہیں حکومت سے ہونے والے بلاواسطہ رابطوں کے حوالے سے بریفنگ دے گا۔ آئی این پی کے مطابق وفد میں خواجہ محمد آصف، احسن اقبال،سردار ایاز صادق اور رانا تنویرشامل ہیں۔لندن پہنچ کر وفد  سابق وزیرقاعظم میاں محمد نواز شریف کی عیادت اور انہیں حکومت سے ہونے والے بلاواسطہ رابطوں کے حوالے سے بریفنگ دے گااور آرمی ایکٹ میں ترمیم کے حوالے سے میاں نواز شریف سے رائے بھی طلب کرے گا، وفد واپسی پر حکومت کو آگاہ کرے گا۔ 

شہباز شریف

مزید :

صفحہ اول -