مہمند،12 سالہ عصمت اللہ کے قتل کا ڈراپ سین،قاتل قریبی رشتہ نکلا

مہمند،12 سالہ عصمت اللہ کے قتل کا ڈراپ سین،قاتل قریبی رشتہ نکلا

  

مہمند (نمائندہ پاکستان) مہمند، 10 دن پہلے تحصیل صافی قنداری میں 12 سالہ لڑکے عصمت اللہ کے قتل کا ڈراپ سین۔ قاتل مقتول کا قریبی رشتہ دار نکلا۔ تفصیلات کے مطابق تحصیل صافی قنداری کے علاقہ کریڑ میں قتل ہونے والے 12 سالہ عصمت اللہ ولد محمد علی کے اندھے قتل کا ایک ہفتے کے اندر قاتل کا سراغ لگا لیا۔ ڈی پی او مہمند کے تشکیل کردہ ڈی ایس پی لیاقت علی کی سربراہی میں ایس ایچ او اپر مہمند سردار حسین، سب انسپکٹرز اسرار خان، بخت محمد، اے ایس آئی مراد خان و دیگر پر مشتمل ٹیم کی کوششوں سے مقتول کے قریبی رشتہ دار واجد اللہ ولد حسین خان کو گرفتار کر لیا۔ مقامی پولیس کے مطابق 21 نومبر 2019 ء کو ضلع مہمند تحصیل صافی کے علاقہ کریڑ میں پولیس کو عصمت اللہ ولد محمد علی کی لاش ملی جس کو چاقو کے وار سے بے دردی کے ساتھ قتل کر دیا گیا تھا۔ ڈی پی او مہمند نے قاتل کا سراغ لگانے کیلئے پولیس پر مشتمل خصو صی نے جدید طریقے سے قاتل کو ایک ہفتے کے قلیل مدت میں سراغ لگا کر کے آلہ قتل بھی برآمد کر لیا۔ پولیس کے مطابق ملزم نے اعتراف جرم کر لیا ہے۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -