دوران تعلیم بچوں کا سکول چھوڑنا پریشان کن عمل، قومی چیلنج،قاسم سوری

دوران تعلیم بچوں کا سکول چھوڑنا پریشان کن عمل، قومی چیلنج،قاسم سوری

  

اسلام آباد (آئی این پی) ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی قاسم سوری نے کہا ہے کہ ملک کو اقتصادی بحران سے نکالنے کیلئے حکومت نئی راہیں تلاش کر رہی ہے،وزیر اعظم عمران خان ملک میں تعلیمی نظام کی بہتری چاہتے ہیں،ایس ڈی جیز فور کے اہداف حاصل کرنے کیلئے وفاق اور صوبوں کا ایک پیج پر آنا ناگزیر ہے۔انسٹی ٹیوٹ آف سوشل اینڈ پالیسی سائنسز کے زیر اہتمام پاکستان کو درپیش تعلیمی چیلنجز سے نمٹنے کے عنوان سے اسلام آباد میں منعقدہ قومی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوے انہوں نے کہا کہ جدید تقاضوں کے پیش نظر تعلیمی نظام میں بہتری وقت کی اہم ضرورت ہے۔تعلیم کو عام کرنا ایک بڑا قومی چیلنج ہے۔ڈپٹی سپیکر قاسم سوری نے کہا کہ پی ٹی آئی کو حکومت میں آنے کے بعد بہت سے چیلنجز کا سامنا تھا،قومی خزانہ خالی اور ادارے تباہ تھے۔انہوں نے کہا کہ اقتصادی بحران سے ملک کو نکالنے کیلئے موجودہ حکومت پر عزم ہے،موجودہ حکومت کی پالیسیوں کے باعث ملک میں معاشی استحکام آ رہا ہے، موڈیز اور دیگر عالمی اداروں کی رپورٹس آج پاکستان کی اقتصادی ترقی کے حوالے سے سب کے سامنے ہیں۔ انہوں نے کہا دوران تعلیم بچوں کا سکول چھوڑنا پریشان کن عمل ہے، امید ہے کہ تعلیمی اصلاحات ترجیحی بنیادوں پر کی جائیں گی۔انہوں نے کہا کہ ایس ڈی جیز فور کے اہداف حاصل کرنے کیلئے وفاق اور صوبوں کا ایک پیج پر آنا ناگزیر ہے۔ ہمیں ملکر ہی نظام کی اس تفریق کو ختم کرنا ہوگا۔

قاسم سوری

مزید :

صفحہ آخر -