سردار تنویر الیاس نے آزاد کشمیر کے اہم ترین دیرینہ مسائل کی نشاندہی کرتے ہوئے حل بھی تجویز کردیا

سردار تنویر الیاس نے آزاد کشمیر کے اہم ترین دیرینہ مسائل کی نشاندہی کرتے ...
سردار تنویر الیاس نے آزاد کشمیر کے اہم ترین دیرینہ مسائل کی نشاندہی کرتے ہوئے حل بھی تجویز کردیا
سورس: File Photo

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)صدر پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) آزاد کشمیر اور سینئر وزیر سردار تنویر الیاس خان نے کہا ہے کہ مارگلہ کی پہاڑیوں سے شروع ہونے والی فالٹ لائن آزاد کشمیر اور ہزارہ کو یکساں متاثر کر رہی ہے،2005ء کے زلزلے کی تباہی ہمارے لئے سبق ہے، جس کی روشنی میں آئندہ آزاد کشمیر کی جملہ تعمیرات کے لئے مربوط پلاننگ کر نا ہو گی تا کہ مستقبل میں کسی ایسے سانحہ کی صورت میں عوام کی جانوں اور املاک کو بچایا جا سکے، عام لوگوں کامعیار زندگی بلند کرنے کے لیئے مربوط پلان موجود ہے جس پر سائینٹفک بنیادوں پر کام کرنے کی ضرورت ہے تا کہ آنے والی نسلوں کی زندگی آسودہ ہو سکے۔

محکمہ فزیکل پلاننگ اینڈ ہاوسنگ  کی منصوبہ بندی کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئےسردار تنویر الیاس خان نے کہا کہ 70 سے زائد برس کا طویل عرصہ گزرنے کے باوجو آزاد کشمیر میں  ٹریفک،ہاؤسنگ،اربنائزیشن اورپانی کی ضرویات ایسے اہم ایشوز پر کوئی توجہ نہیں دی گئی، جس کے نتیجے میں گھمبیر  مسائل جنم لے رہے ہیں،پورے آزاد کشمیر میں کسی  محکمے کے پاس ایک بھی ٹریفک انجینئر موجود نہیں،بے ہنگم ٹریفک نے لوگوں کی روز مرہ کی زندگی اجیرن کر رکھی ہے،شہر اور تحصیل کی سطح پر  سڑکوں اور پارکنگ پلازہ جات کے لئے منظم منصوبہ بندی کی ضرورت ہے،ٹریفک کافلو بڑھنےکی وجہ سےآزاد کشمیرکےچھوٹے شہروں اورقصبوں میں سخت مسائل جنم لے رہے ہیں،35ہزار  کی آبادی پر مشتمل چھوٹے سے  شہر ہجیرہ  میں کسی تقریب کے دوران ایک جگہ سے دوسری جگہ جانے کے لیئے گھنٹے لگ جاتے ہیں،یہ سب پلاننگ  کے نہ ہونے کی وجہ سے ہورہا ہے،آزاد کشمیر کی ٹریفک سٹڈی ضروری ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لیئے منصوبہ بندی حکومت کی اولین ذمہ داری ہے،ماضی میں باقی شعبوں کی طرح سیوریج اور ڈرینیج مکمل نظر انداز کیا گیا ،کوٹلی شہر میں سرے سے سیوریج ڈالی ہی نہیں گئی،جس کی وجہ سے شفاف چشمے ،کنوئیں اور زیر زمین پانی کے دیگر ذرائع مکمل طور پر  آلودہ ہو چکے ہیں، ماضی کی حکومتوں کی فاش غلطیوں کا تدارک کرتے ہوئے نئی منصوبہ بندی کے ساتھ آگے بڑھنا ہو گا،عمران خان کے وژن کی پاسداری ہم سب پر فرض ہے،دن دگنی رات چگنی محنت کر کے خطہ آزاد کشمیر کی تقدیر بدلیں گے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -