این اے 133 ضمنی الیکشن، ن لیگ کامیاب، 9 امیدواروں کی ضمانتیں ضبط، تیسرے نمبر پر آنے والے نے کتنے ووٹ لیے؟ حیران کن تفصیلات

این اے 133 ضمنی الیکشن، ن لیگ کامیاب، 9 امیدواروں کی ضمانتیں ضبط، تیسرے نمبر پر ...
این اے 133 ضمنی الیکشن، ن لیگ کامیاب، 9 امیدواروں کی ضمانتیں ضبط، تیسرے نمبر پر آنے والے نے کتنے ووٹ لیے؟ حیران کن تفصیلات

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) این اے 133 کے ضمنی الیکشن میں مسلم لیگ ن نے میدان مار لیا جب کہ پاکستان پیپلز پارٹی دوسرے نمبر پر رہی۔ 

اس ضمنی الیکشن میں مجموعی طور پر 11 امیدوار حصہ لے رہے تھے لیکن ن لیگ اور پیپلز پارٹی کے سوا باقی کوئی بھی امیدوار خاطر خواہ ووٹ حاصل نہ کرسکا جس کے باعث باقی تمام  نو امیدواروں کی  ضمانتیں ضبط  ہوگئیں۔ این اے 133 میں تیسرے نمبر پر آنے والے امیدوار نے صرف 648 ووٹ حاصل کیے ہیں۔ یہاں یہ بھی واضح رہے کہ حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف کا کوئی امیدوار اس حلقے سے الیکشن میں حصہ نہیں لے رہا تھا۔

یہ  نشست مسلم لیگ ن کے پرویز ملک کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی۔ اس حلقے سے ان کی بیوہ شائستہ پرویز ملک  46 ہزار 811 ووٹ حاصل کرکے کامیابی اپنے نام کی جب کہ پاکستان پیپلز پارٹی کے چوہدری اسلم گل 32 ہزار 313 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

خیال رہے کہ پاکستان میں الیکشن کی شرائط کے مطابق اگر کوئی شخص اپنے حلقے کے کل رجسٹرڈ ووٹوں  کی تعداد میں سے 12 فیصد یا اس  سے کم ووٹ لے تو الیکشن کمیشن اس کی ضمانت ضبط کر لیتا ہے۔ یہ ضمانت الیکشن کمیشن کے پاس بطور فیس جمع کرائی جاتی ہے جو قومی اسمبلی کے حلقے کیلئے  50 ہزار روپے ہوتی ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -