غیرقانونی تعمیرات کیس،ایس بی سی اے کی جانب سے 3 سال بعد جامع اور مفصل جواب جمع نہ کرانے پر عدالت برہم 

غیرقانونی تعمیرات کیس،ایس بی سی اے کی جانب سے 3 سال بعد جامع اور مفصل جواب جمع ...
غیرقانونی تعمیرات کیس،ایس بی سی اے کی جانب سے 3 سال بعد جامع اور مفصل جواب جمع نہ کرانے پر عدالت برہم 

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ ہائیکورٹ گلشن اقبال بلاک 10 میں غیرقانونی تعمیرات کیس میں ایس بی سی اے کی جانب سے 3 سال بعد جامع اور مفصل جواب جمع نہ کرانے پر برہم ہوگئی۔

نجی ٹی وی چینل ایکسپریس نیوز کے مطابق سندھ ہائیکورٹ میں گلشن اقبال بلاک 10 میں غیرقانونی تعمیرات کیس کی سماعت ہوئی،ایس بی سی اے کی جانب سے 3 سال بعد جامع اور مفصل جواب جمع نہ کرانے پر عدالت برہم ہو گئی۔

عدالت نے کہاکہ آپ لوگ 3 سال بعد جواب جمع کرا رہے ہیں،غیرقانونی تعمیرات کیس میں آپ کو فوراً جواب جمع کرانا چاہئے،عدالت نے ایس بی سی اے افسران کو حکم دیا کہ 10 دن بعد مکمل، جامع رپورٹ کیساتھ پیش ہوں،عدالت نے محکمہ آبپاشی کے جواب پر درخواست نمٹا دی ۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -