افغان باشندوں کی جبری بے دخلی پر سپریم کورٹ کا حکومت کونوٹس

افغان باشندوں کی جبری بے دخلی پر سپریم کورٹ کا حکومت کونوٹس
افغان باشندوں کی جبری بے دخلی پر سپریم کورٹ کا حکومت کونوٹس

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سپریم کورٹ نے افغان شہریوں کی جبری بے دخلی کیس میں  گزشتہ سماعت کا تحریری حکم نامہ جاری کر دیا۔

 تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ نے وفاقی اور صوبائی حکومتوں سمیت اپیکس کمیٹی کو نوٹس جاری کر دیا ،عدالت عظمیٰ نے معاونت کے لیے اٹانی جنرل کو بھی نوٹس جاری کیا، حکمنامے کے مطابق درخواستگزار کی جانب سے بڑے پیمانے پر افغان مہاجرین کی بے دخلی کے نگران حکومت کے اختیارات کو چیلنج کیا گیا ہے، درخواستگزار کے وکیل نے کہا کہ نگران حکومت کو آئینی اور قانونی اختیار نہیں کہ وہ افغان مہاجرین کو غیر انسانی طریقے سے بے دخل کرے،  درخواست گزار کے وکیل نے سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر کے سیکشن چار کی نشاندہی کی،  پریکٹس اینڈ پروسیجر قانون کے سیکشن چار کے تحت آئینی تشریح کے مقدمات کی سماعت کم از کم پانچ رکنی لارجر بینچ کرے گا،  کیس کو آئندہ ہفتے سماعت کے لیے مقرر کیا جائے۔

مزید :

جرم و انصاف -