شیل ایکو ،میراتھون ایشیا 2014 میں 8پاکستانی ٹےموں کی شرکت

شیل ایکو ،میراتھون ایشیا 2014 میں 8پاکستانی ٹےموں کی شرکت

  

 لاہور،(پ۔ر) ایشیا بھر اور مشرق وسطیٰ سے طلبہ آج فلپائن کے شہر منیلا پہنچے جہاں وہ اپنی ڈیزائن اور تعمیر کردہ ، کم ایندھن استعمال کرنے والی گاڑیوں کے ذریعے شہر میں ہونے والی میراتھون میں حصہ لیں گے۔ شیل کی جانب سے منعقدہ شیل ایکو ۔میراتھون ایشیا کے پانچویں ایڈیشن میں شرکت کے لئے 109ٹےمیں منیلا پہنچیں ہیںجن میں پاکستان سے 8ٹےمیں بھی شامل ہیں۔یہ پہلا موقع ہے کہ شیل ایکو ۔میراتھون ایشیا منیلا میں منعقد ہو رہی ہے اس سے قبل یہ ملائشیا کے شہر کوالالمپور کے سی پانگ انٹرنیشنل سرکٹ میں منعقد ہوتی تھی۔

اس میراتھون کے لئے شہر یں نئے انتظام کا مقصد حقیقی ماحول میں ایندھن کی کارکردگی کا جائزہ لینا ہے۔کامیابی کا جائزہ رفتار سے نہیں لیا جائےگا، بلکہ ایک لیٹر ایندھن میں زیادہ فاصلہ طے کرنے والی گاڑی فاتح قرار دی جائے گی۔طلبہ ٹیمیں مقابلے کی پروٹو ٹائپ یا اربن کا نسیپٹ وہیکل کیٹگری میں حصہ لے سکتے ہیں۔ پروٹو ٹائپ کیٹگری میں وہ اسٹوڈنٹ ٹیمیں شامل ہوں گی جو ”مستقبل کی تےز رفتار گاڑیاں“ مقابلے میں متعارف کروا رہی ہیں، اور جنکی توجہ حقیقی معنوں میںاپنے جدید ڈیزائن،جیسے ڈریگ ریڈکشن وغےرہ کے ذریعے ایندھن کی کارکردگی پر ہو گی۔اربن کا نسیپٹ وہیکل کیٹگری میں سڑک پر زیادہ ایندھن بچانے والی گاڑیوں کو شامل کیا جائےگا ۔حقیقی زندگی میں ڈرائیور حضرات کی ضرورےات کا خیال رکھنے کیلئے ظاہری طور پر یہ گاڑیاں آج کے دور میں سڑکوں پر دوڑنے والی گاڑیوں جیسی ہی ہیں۔مجموعی طور پر 71 پروٹو ٹائپ اور 38اربن کا نسیپٹ گاڑیاں اس سال کے مقابلوں میں شامل ہیں۔مقابلے کی پروٹو ٹائپ یا اربن کا نسیپٹ وہیکل کیٹگری میں حصہ لینے کی غرض سے گاڑےاں مندرجہ ذیل انرجی ٹائپ کے ذریعے داخل ہو سکتی ہیں:گیسولین، ڈیزل، آلٹرنیٹ گیسولین (ایتھانول۔100)، آلٹرنیٹ ڈیزل(شیل گیس۔ٹو۔لیکوئےڈ یا فیٹی ایسڈ میتھائل ایسٹر)، بیٹری الیکٹرک اور ہائیڈروجن فیول سیل۔تےکنیکی اور ڈیزائن کے حوالے سے طلبہ کو جدت کا مظاہرہ کرنے کی آزادی ہو گی۔واحد شرط یہ ہو گی کہ داخل ہونے والی تمام گاڑےاں تمام حفاظتی تقاضوں کے عین مطابق ہو ں گی۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -