روس کی اسٹیل ملز کی اوورہالنگ میں تکنیکی و غیرتکنیکی مدد دینے کی پیشکش

روس کی اسٹیل ملز کی اوورہالنگ میں تکنیکی و غیرتکنیکی مدد دینے کی پیشکش

کراچی(آن لائن)روس نے پاکستان اسٹیل کی اوورہالنگ میں تکنیکی و غیرتکنیکی مدد دینے کی پیشکش کردی ہے۔یہ پیشکش کراچی میں تعینات رشین فیڈریشن کے قونصل جنرل اولیگ این افیو نے پیر کوٹی ایم اے ہاو¿س میں ٹاولز مینوفیکچررزاینڈ ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن میں منعقدہ اجلاس کے بعد صحافیوں سے بات چیت کے دوران دی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اسٹیل میں بتدریج بہتری رونما ہورہی ہیں جس کی اطلاعات میڈیا کے ذریعے موصول ہو رہی ہیں

 جبکہ روس پاکستان کے اس قومی ادارے کی اوورہالنگ میں معاونت کے لیے تیار ہے۔قبل ازیں انہوں نے ٹاولزایکسپورٹرز کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اور روس کے درمیان بینکاری نظام سے متعلق اقدامات زیرالتوا ہیں، دوطرفہ کمیشن میں بینکاری نظام، کسٹم ٹیرف اور تجارت سے متعلق بات چیت جاری ہے، بینکنگ ریگولیشنز کے علاوہ دیگر متعلقہ اقدامات میں طویل وقت درکار ہوگا۔انہوں نے کہا کہ رشین مارکیٹ میں پاکستانی ٹیکسٹائل مصنوعات کی ڈیمانڈ اور کھپت کی وسیع گنجائش موجود ہے، ضرورت اس امر کی ہے کہ ٹی ایم اے سمیت دیگر نمائندہ تجارتی تنظیمیں پاکستان میں قائم رشین ٹریڈ کمیشن سے رابطے میں رہیں اور دنوں ممالک کے درمیان تجارت کی راہ میں حائل رکاوٹوں کی نشاندہی کریں تاکہ پاکستان اور روس کے درمیان باہمی تجارت کے حجم میں نمایاں اضافہ ممکن ہو۔ روسی قونصل جنرل کہا کہ ٹی ایم اے ماسکو میں سنگل کنٹری نمائش کا اہتمام کرے، روسی قونصلیٹ، رشین ٹریڈ کمیشن اور رشین چیمبرز آف کامرس ہرسطح پر تعاون کے لیے تیار ہیں۔

مزید : کامرس