سائنسدانوں نے ہمیشہ جوان رہنے کے لیے نسخہ ایجاد کر لیا

سائنسدانوں نے ہمیشہ جوان رہنے کے لیے نسخہ ایجاد کر لیا
سائنسدانوں نے ہمیشہ جوان رہنے کے لیے نسخہ ایجاد کر لیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) انسانی صحت اور جوانی کو تادیر برقرار رکھنے کیلئے جستجو کرنے والے سائنسدانوں کو ایک بہت بڑی کامیابی مل گئی ہے جس کے نتیجہ میں نہ صرف جوانوں کو لمبی مدت تک جوان رکھا جاسکے گا بلکہ بوڑھوں کو جوانوں جیسی صحت کی نعمت بھی مل سکے گی۔

امریکا کی سٹینفرڈ یونیورسٹی کے ماہرین نے ایک پیچیدہ تحقیق کے بعد انسانی کروموسومز کی حفاظت کرنے والے قدرتی انزائم ٹیلومرز (Telomeres) کی لمبائی میں اضافے کا طریقہ ڈھونڈ لیا ہے جس کا دوسرا مطلب یہ ہے کہ بوڑھے ہوتے خلیوں کا بڑھاپا ختم کیا جاسکے گا۔ یونیورسٹی کی ماہر جینیات ڈاکٹر ہیلن بالو نے بتایا کہ ٹیلومیرر کو آپ ایسے سمجھ سکے ہیں جیسے کہ تسموں کے سروں پر پلاسٹک کے خول چڑھے ہوتے ہیں تاکہ تسمے خراب ہونے سے محفوظ رہیں، اسی طرح انسانی کروموسومز کے سروں پر ٹیلومیرز ہوتے ہیں۔

کرکٹ کے میدان میں کن دو ممالک کے درمیان سب سے پرانی دشمنی ہے ؟جواب وہ نہیں جو آپ سوچ رہے ہیں

بڑھتی عمر کے ساتھ یہ حفاظتی خول کمزور ہوکر گھستے جاتے ہیں جس کی وجہ سے کروموسومز میں خرابیاں پیدا ہونے لگتی ہیں جو بیماریوں اور بڑھاپے کا سبب بنتے ہیں۔ اب آر این اے (رائبو نیوکلیک ایسڈ) کے استعمال سے ٹیلومیرز کی لمبائی بڑھانےت کا طریقہ دریافت کرلیا گیا ہے۔ ڈاکٹر ہبلن کہتی ہیں کہ اگر بوڑھے لوگوں کے ٹیلومیرز کا سائز بڑھادیا جائے تو ان کے کروموسوم تحلیل ہونے کی بجائے دوبارہ بہتر حالت میں آجائیں گے اور وہ بڑھاپے کی بیماریوں سے محفوظ ہوجائیں گے۔ یہ دریافت ذیا بیطس اور کینسر جیسی موذی بیماریوں سے نجات میں بھی نہایت مددگار ثابت ہوگی۔

مزید : تعلیم و صحت