کروڑوں روپے تاوان کی غرض سے اغواء شدہ مغوی بازیاب،پانچ ملزمان گرفتار

کروڑوں روپے تاوان کی غرض سے اغواء شدہ مغوی بازیاب،پانچ ملزمان گرفتار

  



پشاور (کرائمز رپورٹر) کپیٹل سٹی پولیس پشاور نے کامیاب کاروائی کے دوران تھانہ حیات آبادکی حدود سے کروڑوں روپے تاوان کی غرض سے اغواء ہونے والے مغوی پراپرٹی ڈیلر کوبحفاظت بازیاب کرلیا، بازیاب مغوی کا تعلق حیات آباد پشاور سے ہے، مغوی کو رہائشی گھر میں زنجیروں میں جکڑا گیا تھا، کارروائی کے دوران 5 ملزمان کو گرفتار کر کے ان کے قبضے سے ایک عدد کلا شنکوف، ایک عدد پستول اور اغواء کاروں کے زیر استعمال 15 عدد موبائل فونز بھی برآمد کر لئے گئے، گرفتار ملزمان کا تعلق ضلع چارسدہ،ضلع خیبر اورپشاور کے نواحی علاقے سے ہیں، ملزمان نے ابتدائی تفتیش کید وران مغوی کو تاوان کی غرض سے ا غواء کرنے میں ملوث ہونے کا اعتراف کرلیا ہے جن کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی ہے تفصیلات کے مطابق مدعی میاں ریاض الحق ولد خیال امین سکنہ فیز ون حیات آباد نے تھانہ حیات آباد پولیس کو رپورٹ کی تھی کہ اس کے بھائی سجاد الحق کو کسی نامعلوم ملزمان نے اغوا کر لیا ہے، جو کہ بعد میں اغواء کاروں نے ان سے پانچ کروڑ روپے تاوان کا مطالبہ کیا گیا، جس کی رپورٹس پر نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئیسی سی پی او پشاور محمد علی گنڈا پور نے واقع کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی آپریشن ظہور بابر آفریدی کی نگرانی میں ایس پی کینٹ تصور اقبال،اے ایس پی حیات آباد حسن جہانگیر، ایس ایچ او ظفر خان اور ایس ایچ او شہریار خان پر مشتمل خصوصی ٹیم تشکیل دیتے ہوئے مغوی کی بحفاظت بازیابی اور ملوث ملزمان کو گرفتار کرنے کا ٹاسک حوالہ کیاخصوصی ٹیم نے واقعہ کا جدید سائنسی خطوط پر تفتیش جاری رکھتے ہوئے متعدد جرائم پیشہ اور مشکوک افراد کو شامل تفتیش کرتے ہوئے ان کے بیانات قلمبند کئے جبکہ مغوی کے آس پڑوس اور کاروباری شراکت داروں کی بھی نگرانی شروع کی، اسی طرح مغوی کی بحفاظت بازیابی کی خاطر مختلف مقامات اور مشکوک افراد پر کڑی نظر رکھنے کی خاطر سادہ کپڑوں میں پولیس اہلکاروں کو تعینات کئے، کیس کو منطقی انجام تک پہنچانے اور مغوی کی بازیابی کی خاطر مختلف ذرائع سے بھی معلومات اکھٹی کیں، جس کے دوران پولیس ٹیم کو خفیہ اطلاع موصول ہوئی کہ تھانہ بڈھ بیر کے علاقہ ٹیلہ بند میں ایک رہائشی مکان میں مغوی موجود ہے مکان کی نگرانی شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا جس کے بعد یقین ہونے پر گزشتہ روز کامیاب کارروائی کے دوران واقع مکان سے مغوی سجاد الحق کو زنجیروں میں جھکڑے ہوئے بحفاظت بازیاب کر لیا جبکہ ملوث پانچ ملزمان نوید ولد سید کریم،محمد حیات ولد جمال شاہ،سید علیشاہ عرف فاروق ولد محبوب شاہ ساکنان اتمانزئی چارسدہ حال ٹیلہ بند،جانان خان ولد نواب خان سکنہ ٹیلہ بند اورنوید ولد کمیاگل سکنہ باڑہ حال ٹیلہ بند کو گرفتار کرکے اس کے قبضے سے ایک عدد کلا شنکوف، ایک عدد پستول اور اغواء کاروں کے زیر استعمال 15 عدد موبائل فونز بھی برآمد کر لئے گئے، گرفتار ملزمان نے ابتدائی تفتیش کے دوران اغوائیگی میں ملوث ہونے کا اعتراف کر لیا ہے جبکہ دوران تفتیش اپنے دیگر ساتھیوں کے نام بھی اگل دئیے ہیں جن کی گرفتار ی کی خاطر ایس پی کینٹ تصور اقبال کی سربراہی میں خصوصی ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے،ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہ

مزید : پشاورصفحہ آخر