جماعت اسلامی حلقہ خواتین ضلع پشاور کے زیر اہتمام یکجہتی کشمیر مارچ

  جماعت اسلامی حلقہ خواتین ضلع پشاور کے زیر اہتمام یکجہتی کشمیر مارچ

  



پشاور،اضلاع (سٹی رپورٹر،نمائندگان پاکستان) جماعت اسلامی حلقہ خواتین ضلع پشاور کے زیر اہتمام یکجہتی کشمیر مارچ پشاور پریس کلب کے سامنے ہوا۔ مارچ کی قیادت سابق ممبرقومی اسمبلی عنایت بیگم، ممبرصوبائی اسمبلی حمیر ا بشیر اور ناظم حلقہ خواتین ضلع پشاور یاسمین بانو نے کی۔ کشمیر مارچ میں کثیر تعداد میں خواتین نے شرکت کی۔ کشمیر مارچ سے امیر جماعت اسلامی ضلع پشاور عتیق الرحمن، جنرل سیکرٹری قاری احمد سعید نے بھی خطاب کیا۔ مقررین نے کشمیر مارچ سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ 185دنوں سے مقبوضہ کشمیر میں لاک ڈاؤن ہے۔ سخت سردی کے باعث کرفیو میں کسی بھی قسم کی کوئی نرمی نہیں کی گئی۔ بھارت نے اپنی تمام حدود کو عبور کرلیا ہے۔ مودی سرکار آر ایس ایس کے ایجنڈے پر عمل پیرا ہو کر مسلم اقلیت کو نشانہ بنارہی ہے۔ سیکولر بھارت کا گھناؤنا چہرہ دنیا کے سامنے آچکا ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے جہاں سے پانچوں دریا نکلتے ہیں اور پاکستان کی سرزمین کو سیراب کرتے ہیں۔ اس کو دشمن کے قبضے میں دینا خودکشی کے مترادف ہے۔ مودی دنیا کا خطرناک ترین دہشت گرد ہے۔ اس نے گجرات میں 2ہزار سے زائد مسلمانوں کو شہید کیا اور ان کی اربوں روپے کی املاک کو نقصان پہنچایا تھا، وہ آج بھی بھارت میں بسنے والے مسلمانوں کی زندگی عذاب بنائے ہوئے ہے۔ انسانیت کے علمبردار ممالک اوراقوام متحدہ خاموش تماشائی بنے بیٹھے ہیں۔ عالمی ضمیر مسلمانوں کے معاملے میں مردہ ہوچکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کی آزادی تک جماعت اسلامی اپنی سفارتی اور سیاسی جدوجہد کو جاری رکھ گی۔انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی کشمیریوں کی پشتیبان ہے۔ کشمیر کا بچہ بچہ ہندوستان کے غاصبانہ قبضے سے آزادی چاہتا ہے٭کاٹلنگ میں گورنمنٹ ہائی سکول بابوزئی کاٹلنگ کے زیر اہتمام کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے حوالے سے ریلی نکالی گئی۔ ریلی میں سرکاری سکول کے اساتذہ کرام، عام لوگوں سمیت طلباء نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ سکول کے طلباء نے بینرز اور پلے کارڈز اُٹھا رکھے تھے۔ جس پر کشمیر کے حق میں اور مودی سرکار کے خلاف نعرے درج تھے۔ طلباء نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے کشمیر بنے گا پاکستان، پاکستان زندہ باد کے نعرے بازی کی۔ ریلی کے شرکاء سے سکول کے اساتذہ عظمت اللہ، حبیب اللہ، عزیز احمد، عادل خان اور سردار حسین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر پاکستان کا شہ رگ ہے اور نہتے کشمیریوں کی امداد ہم پر فرض ہے۔ پاکستان سیاسی سفارتی اور اخلاقی حمایت جار ی رکھے گا۔ عالمی دنیا آج بھی کشمیریوں کے حق خودارادیت حصول کیلئے آگے بڑھے اور ظالموں کے ہاتھ روکیں۔ کشمیر کے حوالے سے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر من عن عمل کو یقینی بنایا جائے٭قومی وطن پارٹی لکی مروت کے ضلعی صدر امیرزادہ خان کی قیادت میں ”یوم کشمیر“کے سلسلے میں ریلی نکالی جس میں کالج کے طلباء سمیت پارٹی کارکنوں اور عام شہریوں نے بڑی تعدادمیں شرکت کی شرکاء ریلی نے پلے کارڈاُٹھارکھے تھے جس پرکشمیرکے حق اوربھارت کے مخالف نعرے درج تھے۔،ضلعی امیرزادہ خان نے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ ہم کل بھی مظلوم کشمیریوں کے ساتھ تھے اور آج بھی اپنے مظلوم کشمیری بہن بھائیوں کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں پرامن ریلی سے دنیا کو پیغام دے رہے ہیں کہ پاکستانی امن پرست قوم ہیں بھارت ہمارے صبر کا امتحان نہ لیں منہ توڑ جواب دینے کی بھر پور صلاحیت رکھتے ہیں اُنہوں نے کہ مقبوضہ کشمیر میں مودی سرکار اور بھارتی فوج کے غیر قانونی مداخلت اور جاری بیہمانہ مظالم پر اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کے علمبردار تنظیمیں نوٹس لے کر اپنا کردار ادا کریں بے گناہ کشمیری عوام بالخصوص عورتوں بچوں اور بزرگ شہریوں کوکئی مہنیوں تک محصور کیا گیا اور کھانے پینے کی اشیاء اور شدید قلت پیدا ہوگئی ہے مزید کہناتھا کہ بھارت اور اس کے سرپرست مظلوم کشمیریوں کی زبردست تحریک آزادی سے خوفزدہ ہیں لیکن وہ دن دور نہیں جب کشمیر کے مظلوم مسلمان آزادی کے سورج کو اپنی آنکھوں سے ابھرتا دیکھیں گے۔مقبوضہ کشمیر میں نوجوانوں کو عقوبت خانوں میں انسانیت سوز مظالم کا نشانہ بناکر شہید اور زندگی بھر کیلئے معذور بنایا جارہا ہے۔ سینکڑوں بچیوں اور خواتین کو اغوا کرکے ان کی عزتوں کو پامال کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے دل کشمیری عوام کے ساتھ دھڑکتے ہیں، کشمیریوں کی تکلیف ہماری تکلیف ہے٭ملک کے دیگر حصوں کی طرح رستم میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے طورپر گورنمنٹ ہائی سکول رستم کے زیر اہتمام ریلی نکالی گئی جس میں شرکاء نے مختلف بینرز اور پلے کارڈ اٹھائے رکھے تھے جس پر کشمیر کے نہتے مسلمانوں پر بھارتی مظالم کے خلاف نعرے درج تھے، ریلی جی ایچ ایس رستم سے شروع ہو کر مین بازار رستم سے گزرتے ہوئے رستم پریس کلب کے سامنے جلسے کی اختیار کرلی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مولانا انور حسین اور دیگر نے کہا کہ کشمیر پاکستان کا حصہ ہے اور رہے گا کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی ہم سب پاکستانیوں پر لازمی ہے آزادی اس کا جائز حق ہے آخری دم تک کشمیر کیساتھ آزادی کے اس جنگ میں شانہ بشانہ کڑے ہونگے پاکستان ظاہر کر دیا کہ کشمیر کے نہتے مسلمان اکیلے نہیں ہے ارشاد نبوی ہے کہ تمام مسلم امہ ایک جسم کی طرح ہے وطن پاکستان کے اشارے کی منتظر ہے ہم سب جہاد کشمیر کے تیار ہے حکمرانوں نے بھرپور جدوجہد کی لیکن بھارت اپنے حرکات سے باز نہیں آتا اب اقوام متحدہ اپنے کراردادوں کے مطابق کشمیر کو آزادی دلائے اور بھارت پر زور ڈالے کہ وہاں پر مہینوں سے جاری کرفیو کیوکو فوری طور پر ختم کرے تاکہ کشمیر کے مسلمان کلے آسمان میں سانس لیں سکے آخر میں کشمیر کی آزادی کے لئے اجتماعی دعا مانگی گئی٭کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے سلسلے میں پاک آرمی 55بریگیڈ کے زیر اہتمام جنوبی وزیرستان کے علاقہ مکین اور سام میں ریلیاں نکالی گئی جس میں مختلف مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد قبائلی عمائدین سکول کے طلباء،تاجروں اور دیگر نے کثیرتعداد میں شرکت کی شرکاء ریلی نے بینرز اور کتبے اٹھا رکھے تھے جن پر کشمیر بنے گا پاکستان کے نعرے درج تھے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ملک شاہ جہان اور دیگر نے کہا کہ بھارت جیتنا بھی چاہیے ظلم کرے اس کو منہ کی کھانی پڑے گی کشمیر پاکستان اٹوٹ انگ ہے جو ہمارے لئے شہ رگ کی حیثیت رکھتی ہے ان کا کہنا تھا کہ ہمارے ابا و اجداد نے کشمیر کے لئے بے پناہ قربانیاں دی ہیں اورضرورت پڑنے پر ہم بھی پاک فوج کے شانہ بشانہ کسی قسم کے قربانی سے دریغ نہیں کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر