کشمیر جہاد سے آزاد ہوگا،امریکہ اور بھارت کو صرف سات دن کا وقت دیا جائے،علامہ خادم رضوی نے نعرہ مستانہ بلند کر دیا

کشمیر جہاد سے آزاد ہوگا،امریکہ اور بھارت کو صرف سات دن کا وقت دیا جائے،علامہ ...

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) تحریک لبیک پاکستان کے امیر علامہ خادم حسین  رضوی نے کہا ہے کہ جھوٹی تقریریں کرنے ،بینراور فلیکس لگانے سے نہیں بلکہ کشمیر جہاد سے آزاد ہوگا،بیت المقدس بھی لبیک کے نعرے اور جہاد سے آزاد ہوگا،پاکستانی فوج دنیا کی بہترین فوج ہے،پاک فوج کشمیر کو فتح کرنے نکلے ہم ساتھ کھڑے ہونگے،امریکہ اور بھارت کومسئلہ کشمیر کے حل کیلئے صرف سات دن کا وقت دے دیا جائے،ابدالی،غوری اورشاہین ہم نے بھارت کیلئے بناکر رکھے ہیں۔

لاہور میں  یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے نکالی گئی  ریلی سے خطاب کرتے ہوئے علامہ خادم حسین رضوی کا کہنا تھا کہ کشمیر پاکستان کی نظریاتی، سماجی، سیاسی اور جغرفیائی شہ رگ ہے،بھارت کی یہ بھول ہے کہ وہ مظالم ڈھا کر کشمیریوں کو اپنا غلام بنا لے گا،کشمیر یوں کی آزادی کی جدوجہد ضرور رنگ لائیگی،اقوام عالم کی کشمیر میں جاری مظالم پر خاموشی تشویشناک ہے،کشمیر میں جاری مظالم کوچھ ماہ ہوگئے ہیں لیکن نام نہاد عالمی امن کے ٹھیکیدار نہتے مسلمانوں کے قتل عام پر خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کو 80لا کھ لوگوں کی جیل بنا دیا گیا ہے، ایسے سنگین حالات میں اقوام عالم کی خاموشی سے بھارت کو مزید شے ملی ہے اور وہ اپنے مظالم میں دن بدن اضافہ کر رہا ہے،تاریخ گواہ ہے کہ جن قوموں نے آزادی کے لئے طویل جدوجہد کی ہے وہ اپنے مقاصد میں ضرور کامیاب ہوئی ہیں،وہ دن دور نہیں جب کشمیر بھی آزاد ہوگا،بھارت سمیت دنیا بھر میں امن کے ٹھیکیداروں کو پیغام دینا چاہتے ہیں کہ پاکستانی قوم کشمیریوں کے ساتھ کل بھی کھڑی تھی آج بھی کھڑی اور آئندہ بھی کھڑی رہے گی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کا نصاب تبدیل کرنے والے ڈرامہ بازی بند کرے،شعائر اسلام کی توہین کرنے والے بھارت یا یورپ چلے جائیں،پاکستان اسلام کے نام پر بنا یہاں صرف محمد عربی ﷺ کا دین ہی چلے گا،ہماری گردنیں دین کی سربلندی اور ختم نبوت کے تحفظ کیلئے رکھی ہیں۔علماء کرام کے متعلق توہین آمیز گفتگو کرنے والے ہوش کے ناخن لیں۔تحریک لبیک کی خاموشی کو کمزوری نہ سمجھا جائے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور