مقبوضہ وادی میں دن بدن تشدد میں اضافہ ہوا ہے، شیریں مزاری

مقبوضہ وادی میں دن بدن تشدد میں اضافہ ہوا ہے، شیریں مزاری
مقبوضہ وادی میں دن بدن تشدد میں اضافہ ہوا ہے، شیریں مزاری
سورس:   File

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر انسانی حقوق ڈاکٹر شیریں مزاری کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم دن بدن بڑھتے جارہے ہیں۔ پاکستان اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق حق خودارادیت کے حصول تک کشمیریوں کے ساتھ دل و جان کے ساتھ کھڑا ہے۔

سرکاری نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس پاکستان (اے پی پی) سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر نے کہا کہ فاشسٹ مودی حکومت نے جنیوا کنونشن کو مسترد کردیا ہے۔ کشمیری خواتین کو بھارتی غیر قانونی مقبوضہ جموں وکشمیر کے پوش پورہ اور کپواڑہ اضلاع میں اجتماعی عصمت دری کی گئی ہےجو انسانی حقوق کی بدترین پامالی کی جارہی ہے۔ 

شیریں مزاری نے کہا کہ وزیر اعظم نے بین الاقوامی فورموں میں مسئلہ کشمیر پر روشنی ڈالی تھی اور امریکہ کو مسئلہ کشمیر کی حساسیت سے آگاہ کیا تھا۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ انسانی حقوق کے عالمی گروہ کو غیر قانونی طور پر نظربند کشمیری رہنماؤں یاسین ملک ، سید علی گیلانی ، آسیہ اندرابی اور دیگر افراد کو تہاڑ جیل سے رہائی یقینی بنانے کیلئے یو این سی ایچ آر اور دیگر عالمی فورموں میں لے جانا چاہیے۔

مزید :

قومی -