خالد مشعل کی سوشل میڈیا پرکسی قسم کی سرگرمی کی سختی سے تردید

خالد مشعل کی سوشل میڈیا پرکسی قسم کی سرگرمی کی سختی سے تردید

دوحہ (این این آئی) حماس کے سیاسی شعبے کے سربراہ خالد مشعل نے سوشل میڈیا پر اپنے کسی بھی اکاؤنٹ کی موجودگی کی سختی سے تردید کرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ ان کی سماجی رابطے کی ویب سائیٹس کے ذریعے کسی قسم کی سرگرمی نہیں ہے۔خالد مشعل کے نام سے سوشل میڈیا پر قائم جعلی اکاؤنٹس کا معاملہ ایک بار پھر زیربحث آگیا ہے۔ خالد مشعل سمیت جماعت کی قیادت نے ان جعلی اکاؤنٹس کی سختی سے تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ خالد مشعل کے نام سے سرگرم جتنے بھی اکاؤنٹس سوشل میڈیا پر موجود ہیں ان پر پوسٹ کردہ بیانات کا جماعت کے سیاسی شعبے کے سربراہ سے کوئی تعلق نہیں ہے کیونکہ خالد مشعل کا سوشل میڈیا پر کوئی اکاؤنٹ نہیں ہے۔ادھر حماس کے سیاسی شعبے سینئر رکن عزت الرشق نے کہا ہے کہ جماعت کے سیاسی شعبے کے سربراہ خالد مشعل کا سوشل میڈیا پرکوئی اکاؤنٹ نہیں اور نہ ہی وہ سوشل میڈیا کے ذریعے کسی قسم کے بیان جاری کرتے ہیں۔

خالد مشعل کے نام سے سماجی رابطے کی ویب سائیٹس پر جتنے بھی اکاؤنٹس چل رہے ہیں وہ سب جعلی ہیں جن کا حماس یا خالد مشعل کیساتھ کوئی تعلق نہیں ہے۔ اس لئے ان اکاؤنٹس پرچلنے والے بیانات کا بھی خالد مشعل اور جماعت کی قیادت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔عزت الرشق نے اپنے ’ٹوئٹر‘ اکاؤنٹ کے ذریعے اس امر کی وضاحت کی کہ بعض علاقائی قوتیں حماس کو بدنام کرنے اور سازشوں کو ہوا دینے کیلئے خالد مشعل کے نام سے جعلی اکاؤنٹس چلا رہی ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ خالد مشعل کا سوشل میڈیا پر کوئی اکاؤنٹ نہیں ہے۔ حماس عوام الناس پریہ واضح کررہی ہے کہ سوشل میڈیا پرخالد مشعل کے نام سے سرگرم اکاؤنٹس کی کوئی حقیقت نہیں ہے۔ ان کا نہ تو فیس بک پر کوئی اکاؤنٹ ہے اور نہ ہی ٹویٹر پر ہے۔فلسطینی تجزیہ نگار اور ممتاز ماہر تعلیم ڈاکٹر عبدالستار قاسم نے کہا کہ سوشل میڈیا پر خالد مشعل کے نام سے جعلی اکاؤنٹس بنانا حماس اور مزاحمت کیخلاف جاری سازشوں کا حصہ ہے۔ ان سازشوں میں وہ عناصر ملوث ہوسکتے ہیں جو اسرائیل کو خوش کرنا چاہتے ہیں۔

مزید : عالمی منظر