ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی 33فی صد پلاٹس دینے کی پابند ہے، صدیق الفاروق

ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی 33فی صد پلاٹس دینے کی پابند ہے، صدیق الفاروق

لاہور(خبرنگار خصوصی) متروکہ وقف املاک بورڈ کے چیئرمین صدیق الفاروق نے کہا ہے کہ ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی ( ڈی ایچ اے) سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں 33فی صد پلاٹس دینے کی پابند ہے جس پر تا حال عملدرآمد نہیں ہوا،اگر آئندہ چند روز میں سپریم کورٹ کے احکامات پر عملدر آمد نہ ہوا تو وہ تقریباً ایک ہزار کنال وقف اراضی بورڈ کو واپس کردیں ،بورڈ کے ممبران آج سے ملک بھر میں قائم بورڈ کے دفاتر کی چیکنگ کے لیے با اختیار ہونگے اور ٹرسٹ بورڈ کی کوتاہیو ں کی نشاندہی سمیت اس کی کارکردگی کو بہتر بنانے کیلئے اپنی تجاویز سے بھی آگاہ کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بورڈ آفس میں منعقدہ بورڈ ممبران کے 295ویں اجلاس کے بعد میڈیا کے نمائندوں کو بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔اس موقع پر سیکرٹری بورڈ اکرام الحق ،سٹاف آفیسر ظفر اقبال ، پی آر او عامر حسین ہاشمی، گلریز چوہدری بھی موجود تھے۔ صدیق الفاروق نے کہا کہ بورڈ ممبران نے متفقہ طور پر فیصلہ کیا ہے کہ جنم استھان کی توہین کرنے، وفاقی وزیر، خواتین سمیت دیگر اعلی ٰ حکام اور افراد کو یر غمال بنانے ، مذہبی مقام کی توڑ پھوڑ کرنے اور اداروں و ایجنسیوں کے سیکیورٹی پلان کو سبوتا ژکرنے والو ں کے خلاف بلا خوف کارروائی جاری رکھی جائے اور جو قانونی مؤقف اپنایا گیا ہے اس سے انحراف نہ کیا جائے۔بورڈ میٹنگ میں سانحہ25نومبر ننکانہ صاحب کی بھر پور انداز میں مذمت کی گئی، اس بات کا سختی سے نوٹس لیا گیا کہ اس معاملہ کی اب تک باضابطہ انکوائری اور ضلعی انتظامیہ و ضلعی پولیس افسران جو اپنے ذمہ داریوں سے عہدہ برآ نہیں ہو سکے انکے خلاف کارروائی کیوں نہ ہوئی ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سردار مستان سنگھ کو سپورٹ کرنے والے در حقیت مقدس مقام جنم استھان کی توہین کے عمل کو سپورٹ کر رہے ہیں،جو مٹھی بھر لوگ مستان سنگھ کے ساتھ کھڑے ہیں وہ بتائیں کیا سکھ مت میں مقدس مقام کی بے حرمتی ، توڑ پھوڑ جائزاوربا با گورونانک کی تعلیمات کے مطابق ہے۔اجلاس میں کئی ایک اہم معاملات زیر غور آئے اور بعض پر اہم فیصلے بھی کیے گئے ۔

مزید : ملتان صفحہ اول