بجلی ‘گیس کی بدترین لوڈشیڈنگ صارفین کی زندگی اجیرن ‘امور ٹھپ

بجلی ‘گیس کی بدترین لوڈشیڈنگ صارفین کی زندگی اجیرن ‘امور ٹھپ

ملتان(سٹاف رپورٹر ) بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ پھر شروع ہو گئی‘14گھنٹے تک بجلی کی بندش سے صارفین عذاب میں آگئے ۔سوئی گیس کی لوڈشیڈنگ نے بھی زندگی اجیرن کردی۔ تفصیل(بقیہ نمبر41صفحہ7پر )

کے مطابق سردیوں میں بجلی کا استعمال کم ہونے کے باوجود بدترین لوڈشیڈنگ شروع کر دی گئی ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ نہروں کی بندش اورگیس کی قلت سے بجلی کی لوڈشیڈنگ میں اضافہ ہو گیا ہے اور شارٹ فال مجموعی طور پر 4ہزار میگاواٹ سے بھی بڑھ گیا ہے۔ نہروں کی بھل صفائی کے باعث ڈیمز سے بجلی کی پیداوار میں کمی ہو گئی ہے جبکہ شدید دھند کے باعث 4پاور پلانٹس نشاط‘ چونیاں ‘ گدواور ہیڈ بلوکی بند ہو گئے ہیں۔بند ہونے والے پاور پلانٹس کو ایل این جی کی کمی کا بھی سامنا ہے۔پیپکو ذرائع کے مطابق پاورپلانٹس بند ہونے کے باعث 3ہزار میگا واٹ کے قریب بجلی سسٹم سے نکل گئی ہے اور میپکو ‘ لیسکو‘ فیسکو سمیت دیگر بجلی کمپنیوں نے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ شروع کر دیا ہے۔علاوہ ازیں شدید دھند کے باعث میپکو کے متعدد فیڈرز ٹرپ کر گئے ۔ شارٹ فال کے باعث جنوبی پنجاب میں 14گھنٹے تک لوڈشیڈنگ کی جا رہی ہے ۔ نواحی علاقوں میں بدترین لوڈشیڈنگ کی جا رہی ہے۔ مختلف علاقوں میں ہر گھنٹے کے بعد ایک گھنٹے کے لئے بجلی بند کی جا رہی ہے۔ مرمت و دیکھ بھال کے کاموں کے لئے الگ سے بجلی بند کی جارہی ہے ۔ اس کے علاوہ شدید سردی میں سوئی گیس کی بندش میں مزید اضافہ ہوگیا ہے جس کے باعث صارفین اذیت میں مبتلا ہو چکے ہیں شہریوں نے شدید احتجاج کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان سے مطالبہ کیا ہے کہ صورتحال کانوٹس لے کر عوام کو بجلی اور گیس کی لوڈشیڈنگ سے نجات دلائیں ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...