ٹانک میں بار کونسل کے وکلاء کا ڈی آئی جی کیخلاف مظاہرہ

ٹانک میں بار کونسل کے وکلاء کا ڈی آئی جی کیخلاف مظاہرہ

ٹانک(نمائندہ خصوصی)ڈپٹی انسپکٹر جنرل پولیس ڈیرہ ریجن دار علی خٹک کے دورہ ٹانک کے موقع پر ٹانک بار کونسل کے وکلاء کا احتجاجی مظاہرہ ضلعی پولیس آفسیر کے خلاف شدید نعرہ بازی اور ان کے تبادلے کامطالبہ ٹانک کے نواحی گاؤں اماخیل میں چند روز قبل گھر کے قریب قتل ہونے والے معروف قانون دان اور ٹانک بار کے جنرل سیکرٹری سید العظم قتل کر دیا گیا تھا قاتلوں کی عدم گرفتاری اور وکلاء کو تحفظ نہ دینے پر وکلاء برادری کا ڈی آئی جی ڈیرہ دار علی خٹک کی ٹانک میں منعقدہ کھلی کچہری کے موقع پر شدید احتجاج مظاہرہ کیا اور پولیس کے خلاف نعرہ بازی کی مظاہرہ کے دوران وکلاء برادری نے پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پرپولیس کے خلاف نعرے درج تھے احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے ٹانک کے بار صدر پیر عبد الغفار شاہ ایڈوکیٹ،سینئر قانون دان زاہد ایڈوکیٹ ،شاہ فہد انصاری ایڈوکیٹ اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ٹانک میں آئے روز چوری اورڈکیتیوں کی وارداتوں میں اضافہ ہو رہا ہے اور پولیس ٹس سے مس نہیں ہو رہی ہے پولیس عوام کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام ہو چکی ہے انہوں نے کہا کہ وکلاء کو گھروں کو دہلیز پر قتل کیا جا رہا ہے لیکن قاتل فرار ہونے میں کامیاب ہو جاتے ہیں پولیس وکلاء کو سیکورٹی دینے کی بجائے ان سے سیکورٹی واپس لے رہی ہے جس کی وجہ سے وکلاء عدم تحفظ کا شکار ہو رہے ہیں انہوں نے انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختون خواہ سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ ضلعی پولیس سربراہ کو ٹانک سے فوری طور پر تبدیل کریں جبکہ بار روم کے جنرل سیکرٹری کے قتل میں ملوث ملزمان کو فوری طور پر گرفتار کیا جائے اور وکلاء کو سیکورٹی فراہم کی جائے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...