شیخ رشید کا شہباز کو چیئر مین پی اے سی بنانے پر عدالت جانے کا اعلان

شیخ رشید کا شہباز کو چیئر مین پی اے سی بنانے پر عدالت جانے کا اعلان

اسلام اباد(سٹاف رپورٹر) وزیرریلوے شیخ رشید نے شہبازشریف کو چیئرمین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی بنائے جانے پر اپنی ہی اتحادی حکومت کیخلاف سپریم کورٹ جانے کا اعلان کردیا۔اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا فوجی عدالتوں کو دو سال کی ایکسٹینشن دیے جانے کا حامی ہوں کیونکہ فوجی عدالتوں نے زبردست کام کیاہے، کم از کم دو سال میں بہت سارے لوگوں کو پھانسیاں ہو ئیں اور جیلوں میں گئے ہیں۔ 14 سال بعد پھر ریلوے میں وزیر آیا تو کرپشن کے کیسز وہیں پڑے ہیں۔ وزیر ریلوے نے شہبازشریف کا نام لیے بغیر کہا میں تو ایک بندے کے پیچھے لگا ہوں، دودھ کی رکھوالی پر بلے کو بٹھا دیا جائے تو وہاں احتساب نہیں ہوسکتا۔شیخ رشید نے پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے معاملے پر کہا حکومت کا یہ فیصلہ قبول نہیں کہ چور وزرا اور سیکریٹریز کو بلائے، چور ڈاکو کسی کا احتساب نہیں کرسکتا، اس کیخلا ف سپریم کورٹ جارہا ہوں۔عمران خان کو ووٹ کرپٹ لوگوں کو شکنجے میں لانے کیلئے ملا ہے، اگر ہماری ضرورت کرپٹ لوگوں کیساتھ مل کر چلنے کی ہے تو یہ اچھی موو نہیں۔واضح رہے پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیئرمین شپ کے حوالے سے گزشتہ 3 ماہ سے حکومت اور اپوزیشن میں ڈیڈ لاک برقرار تھا اور حکومت نے بطور چیئرمین شہباز شریف کی نامزدگی کو مسترد کردیا تھا جبکہ اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان نے بھی کہا تھا شہبازشریف کو چیئرمین پی اے سے کسی صورت نہیں بنائیں گے۔وزیراعظم کی جانب سے شہبازشریف کو چیئرمین پی اے سی بنائے جانیپر شیخ رشید نے پہلے دن سے اپنے تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

شیخ رشید

مزید : صفحہ اول


loading...