کراچی ، پی ٹی آئی کے ارکان سندھ اسمبلی کا صوبائی الیکشن کمیشن کا دورہ

کراچی ، پی ٹی آئی کے ارکان سندھ اسمبلی کا صوبائی الیکشن کمیشن کا دورہ

کراچی(اسٹاف رپورٹر) پاکستان تحریک انصاف کراچی ڈویژن کے صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان کی قیادت میں پی ٹی آئی اراکین اسمبلی کے وفد نے الیکشن کمیشن کا دورہ کیا۔ حلقہ پی ایس 94سے تحریک انصاف کے امیدوار وجنرل سیکریٹری پی ٹی آئی کراچی اشرف قریشی اور اراکین اسمبلی بھی وفد میں شامل تھے۔ بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خرم شیر زمان نے کہا کہ ہم نے الیکشن کمیشن سے ضمنی انتخابات 24کی بجائے 27جنوری کو کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔ الیکشن جمعرات کی بجائے اتوار کے دن ہونا چاہئے کیونکہ ضمنی انتخابات میں ویسے ہی ٹرن آؤٹ کم ہوتا ہے۔ ورکنگ ڈے پر انتخابات سے ٹرن آؤٹ مزید کم ہوجائے گا۔الیکشن عام تعطیل والے دن رکھا جائے تاکہ عوام مستفید ہوں اور زیادہ سے زیادہ ووٹر آسکیں۔ دوسری بات یہ کہ حلقہ انتخاب سیکورٹی حوالے سے خدشات سے گھرا ہوا ہے۔ اگر سیکورٹی خدشات اور ٹھپہ مافیا سے چھٹکارہ مل جائے تو پی ٹی آئی کو کوئی سیاسی جماعت نہیں ہرا سکتی۔ انتخابات افواج پاکستان کی نگرانی میں ہونا ضروری ہے۔ تیسری گزارش یہ ہے کہ آرٹی ایس سسٹم کے معاملات کو بہتر بنایا جائے تاکہ اس قسم کا کوئی مسئلہ نہ آئے۔ چوتھی بات ترقیاتی کاموں کے ڈرامے کے حوالے سے تھی کہ گزشتہ پچیس تیس سال سے سندھ حکومت نے اس علاقے میں کوئی کام نہیں کیا۔ چاہتے ہیں کہ سندھ حکومت ضمنی انتخابات کے حلقے میں بیس دن کے لیے ترقیاتی کام بند کرے۔ آج پی ٹی آئی کے خوف نے ستایا تو ترقیاتی کام شروع کردئیے گئے۔ ہم نے الیکشن کمیشن سے ترقیاتی کام روکنے کی گزارش کی ہے۔ پی ٹی آئی پی ایس 94 کے الیکشن کو بہت بڑے فرق سے جیتے گی۔ پی ٹی آئی عام انتخابات اور ضمنی انتخابات جیت چکی ہے، اس حلقے سے بھی جیت ہماری ہوگی۔ کراچی پہلے بھی پی ٹی آئی کا تھا اور آگے بھی کراچی کا رہے گا۔ میڈیا کے ذریعے عوام سے گزارش ہے عمران خان کا ساتھ دیجئے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...