صوابی ،کنٹریکٹروں کا 15 فیصد ناقابل برادشت ٹیکس کیخلاف مظاہرہ

صوابی ،کنٹریکٹروں کا 15 فیصد ناقابل برادشت ٹیکس کیخلاف مظاہرہ

ٹوپی (تحصیل رپورٹر) ضلع صوابی کنٹریکٹروں نے پختون خوا روینیو اتھارٹی کی جانب سے 15فیصد ظالمانہ ٹیکس لاگو رنے فنڈز کی بندش ایف بی آر کی طرف سے تمام کنٹریکٹرز کے اکاونٹس منجمنداور2018ایم آر ایس شیڈول جاری نہ کرنے کے خلاف صوابی امن چوک میں اختجاجی مظاہرہ کیا گیا اختجاجی مظاہرین نے ڈپٹی کمشنر دفتر صوابی تک سیاہ پٹیوں سمیت ریلی تفصیلات کے مطابق صوابی کنٹریکٹرز ایسوسی ایشن کے ضلعی صدر مظہر علی جنرل سیکریٹری رحیم تاج، فضل آمین ، ظاہر شاہ، محمد اجمل ،میاں اقتصاد علی کی قیادت میں ضلع بھر کے ٹھیکیداروں کا اختجاجی مظاہرہ سی اینڈ ڈبلیو سے ریلی کی شکل میں نکل کر ڈپٹی کمشنر دفترصوابی تک گئے جہاں پر جلسہ کی شکل اختیار کرگیااختجاجی جلسہ سے صوابی کنٹریکٹرز ایسوسی ایشن کے ضلعی صدر مظہر علی جنرل سیکریٹری رحیم تاج، فضل آمین ، ظاہر شاہ، محمد اجمل ،میاں اقتصاد علی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے مطالبات تسلیم نہیں کئے گئے تو ٹینڈروں کے خلاف بائی کاٹ جاری رہے گا بلکہ ہر قسم تعمیراتی کام بند کریں گے مقررین نے اس بات پر سخت افسوس کا اظہار کیا کہ حکومت نے ایک طرف ٹھیکیداروں کے بقایا جات کی ادا ئیگی نہیں کررہے ہیں تو دوسری طرف ایف بی آر نے ہمارے اکاونٹ منجمد کردئے ہیں پختون خوا ریوینو اتھارٹی نے ظلم کی انتہا کرکے 15فیصد ظالمانہ ٹیکس لاگو کیا ہے اس کو فلفور ختم کیا جائے ای بلنگ اور ای بڈنگ کو ختم کیا جائے جب کہ2019ایم آر ایس شیڈول جاری کریں انہوں نے کہا کہ حکومت کے ان ظالمانہ ٹیکسز اور اقدامات کو ختم نہیں کیا تو صوبہ بھر میں ترقیاتی کام بند ہو جائیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...