’’ ہاں ، میں ماڈلنگ بھی کرتا تھا‘‘

’’ ہاں ، میں ماڈلنگ بھی کرتا تھا‘‘
’’ ہاں ، میں ماڈلنگ بھی کرتا تھا‘‘

  


لاہور (ویب ڈیسک) وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی سے دوران پروگرام سوال کیا گیا کہ ہم نے آپ سے متعلق پڑھا ہے کہ آپ ماڈلنگ بھی کر چکے ہیں؟۔تو شہریار آفریدی نے جواب دیا کہ ہاں ایک وقت تھا جب میں ماڈلنگ کرتا تھا۔

شہریار آفریدی سے سوال کیا گیا کہ آخر آپ کو ماڈلنگ کا شوق کیسے پیدا ہوا جس کا جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ میں لاہور میں جی سی کالج میں پڑھتا تھا تب میں کرکٹ بھی کھیلتا تھا۔اس وقت میری شخصیت بالکل مختلف تھی اور پھر یہ سلسلہ شروع ہو گیا،میں نے ایک فلم ایوارڈ شو کو ہوسٹ بھی کیا تھا۔مجھے اس کے بعد بہت آفرز بھی آئیں تاہم مجھے اس کام میں دلچسپی نہیں تھی۔اللہ نے مجھ پر بہت کرم کیا ہے کیونکہ جب تک آپ کسی کام کو مکمل جذبے کے ساتھ نہ کریں تو آپ اس میں کامیابی حاصل نہیں کر سکتے۔کسی بھی کام کے لیے آپ کو جذبہ چاہئیے ہوتا ہے جو آپ کو کامیابی کی طرف لے جاتا ہے۔

شہریار آفریدی نے مزید کہا کہ پرفارمنگ آرٹ سے لوگوں کی زندگیاں بدلی ہیں۔سینما اب ایک ایسا پلیٹ فارم بن گیا ہے جس کے ذریعے سے لوگ اپنے خواب پورے کر رہے ہیں اور دنیا میں اپنے کلچر کو معتارف کروا رہے ہیں۔جب کہ دوسری طرف سوشل میڈیا صارفین نے شہر آفریدی کی زندگی کا دلچسپ پہلو جاننے کے بعد مختلف قسم کے قبصے بھی کیے ہیں۔

واضح رہے شہریار آفریدی پاکستان تحریک انصاف کے رہنما ہیں جب کہ بطوروزیر مملکت برائے داخلہ اپنی خدمات سر انجام کر رہے ہیں۔شہریار آفریدی اپنے خوبصورت لب ولہجے کی وجہ سے بہت شہرت رکھتے ہیں۔شہریا آفریدی کی سوشل میڈیا پر وزیر بننے کے بعد جیل پر اچانک چھاپوں اور قیدیوں کے ساتھ ہمدردانہ رویے کی ویڈیوز بھی وائرل ہوئی۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...