پہلے پریشان ہوتے تھے ، اب احدچیمہ بڑے اطمینان سے پیش ہوتے ہیں!ایاز امیر

پہلے پریشان ہوتے تھے ، اب احدچیمہ بڑے اطمینان سے پیش ہوتے ہیں!ایاز امیر
پہلے پریشان ہوتے تھے ، اب احدچیمہ بڑے اطمینان سے پیش ہوتے ہیں!ایاز امیر

  


لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)تجزیہ کارایاز امیر نے کہاہے کہ کہ اب احد چیمہ اور فواد حسن فواد کے کیسز میں الزامات کہاں ہیں ، ان کے چالان کہاں ہیں؟ اب جب احد چیمہ کی پیشی ہوتی ہے وہ اطمینان سے آتے ہیں ، پہلے پیشی کے موقع پر پریشان ہوتے تھے۔

دنیانیوز کے پروگرام ”تھنک ٹینک “ میں گفتگو کرتے ہوئے ایاز امیرنے کہاکہ احتساب میں ریاستی ادارے لگے ہوئے ہیں، پاکستان میں ہمیشہ کچھ چیزیں نظر آتی ہیں اورکچھ نظر نہیں آتیں، یہ چیز یں جب مل کر احتساب کرتی ہیں تو جوچیز ڈھونڈنا ہو وہ مل جاتی ہیں لیکن جہاں کوئی اور ہوتا ہے تو وہاں کیوں ہاتھ رکھ دیئے جاتے ہیں ، وہا ں چھ سامنے اوران کے پیچھے چھ سو کیوں نہیں بیٹھے ہوتے ۔

انہوں نے کہا کہ عاصم حسین کے بارے میں تھا کہ وہ چار سو بلین کھا گیا اور ایان علی تو پکڑی گئی تھی لیکن اس کے کیس میں ایک تفتیشی افسر قتل ہوگیا تو اس کے قتل کا کیابنا ؟ کیااس انسپکٹر کی بیوہ اور بچے نہیں ہونگے؟ نالائق سے نالائق آدمی بھی جانتا تھا کہ اگر ایان علی کو ضمانت ملی تو اس نے باہر جاناہے اور واپس نہیں آنا ۔ انہوں نے کہا کہ اب احد چیمہ اور فواد حسن فواد کے کیسز میں الزامات کہاں ہیں ، ان کے چالان کہاں ہیں؟ اب جب احد چیمہ کی پیشی ہوتی ہے وہ اطمینان سے آتے ہیں ، پہلے پیشی کے موقع پر پریشان ہوتے تھے ۔

مزید : قومی


loading...