صوابی، عدالت میں پیشی کے بعد لاپتہ افراد کے لواحقین کا احتجاجی مظاہر ہ

صوابی، عدالت میں پیشی کے بعد لاپتہ افراد کے لواحقین کا احتجاجی مظاہر ہ

  



صوابی(بیورورپورٹ)عدالت سے ضمانت ہونے پر پیشی کے بعد لا پتہ ہونے والے پانچ افراد کی بازیابی کے لئے موضع درہ کے عوام نے صوابی میں احتجاجی مظاہرہ کیا۔ اور کل سوموار تک لاپتہ ہونے والے افراد کو بازیاب کرانے کے لئے ڈیڈ لائن دیدی موضع درہ کے عوام نے کرنل شیر چوک صوابی میں احتجاجی مظاہرہ کیا جس سے قومی وطن پارٹی کے ضلعی چیر مین مسعود جبار کے علاوہ ضلع کونسل صوابی کے سابق رکن حشمت اللہ ٹرک آنرز ایسو سی ایشن کے ضلعی صدر حاجی فضل انور و دیگر نے خطاب کر تے ہوئے کہا کہ صوابی کے نواحی گاؤں درہ کے پانچ رشتہ دار اسد، اختر امین، زوہیب، سالم اور بہادر جو کہ آپس میں چچا زاد بھائی بھی ہے گذشتہ روز ایک کیس میں ضمانت ہونے پر عدالت میں پیشی کے بعد واپس اپنے گاؤں آرہے تھے جب وہ جوڈیشل کمپلیکس کے سامنے مین روڈ پر پہنچے تو اس دوران پانچوں پر اسرار طور پر غائب ہو گئے اس سلسلے میں لاپتہ ہونے والے افراد کے والد نے تھانہ زیدہ میں رپورٹ بھی در ج کرائی لیکن چھتیس گھنٹے گزر جانے کے باوجود لاپتہ ہونے والے افراد کے بارے میں کسی قسم کا پتہ نہیں چل سکاانہوں نے کہا کہ اگر ان پر کسی قسم کی ایف آئی آر یا مقدمہ ہو تو ہمیں وضاحت دی جائے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ لاپت ہونے والے افراد کو سوموار تک بازیاب کرایا جائے پولیس حکام نے مظاہرین سے پیر کے روز تک مہلت مانگ لی۔جس پر مظاہرین پر امن طور پر منتشر ہو گئے۔#

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...