جمہوریت کیلئے تمام ادارے آئین اورقانون کی پابندی کریں، لیاقت بلوچ

  جمہوریت کیلئے تمام ادارے آئین اورقانون کی پابندی کریں، لیاقت بلوچ

  



ملتان (سٹی رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور صدر مجلس قائمہ سیاسی امور لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ جماعت اسلامی نے پاک فوج کے نظم و ضبط اور غیر متنازع قومی ادارہ کی حیثیت قائم رکھنے کے لیے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کی حمایت نہ کرنے کا فیصلہ کیاہے۔ جمہوریت، پارلیمانی نظام کی بحالی اور استحکام کے لیے ناگزیر ہے کہ ریاست کے تمام ادارے آئین اور قانون کی پابندی کریں۔ پارلیمانی تاریخ میں ایک فرد کو سامنے رکھ کر کی گئی قانون سازی ہمیشہ متنازعہ اور ناقص (بقیہ نمبر34صفحہ12پر)

قانون سازی کہلاتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کا ترامیم کے لیے مجوزہ بل زیادہ الجھاؤ پیدا کرے گا۔ جب حکومت سپریم کورٹ کے فیصلہ پر نظر ثانی اپیل میں چلی گئی ہے تو اس فیصلہ کا انتظار کیا جائے، عمومی طور پر عدالت میں زیر بحث معاملہ پر قانون سازی نہیں کی جاتی ۔ صوابدیدی اختیا ر کے استعمال میں بھی حماقتیں کی گئیں پھر سپریم کورٹ کی رہنمائی کے مطابق وزیراعظم نے خود اپوزیشن جماعتوں، پارلیمانی رہنماؤں سے رابطہ کی زحمت گوارا نہیں کی۔

لیاقت بلوچ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...