میئر کراچی وسیم اختر نے بیٹے کے ہاتھوں زخمی حسنین سے معافی مانگ لی

میئر کراچی وسیم اختر نے بیٹے کے ہاتھوں زخمی حسنین سے معافی مانگ لی

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)میئر کراچی وسیم اختر نے بیٹے کے ہاتھوں زخمی حسنین سے معافی مانگ لی اور کہاہے کہ اس طرح کا واقعہ نہیں ہونا چاہئے تھا، ہم سب بھائی ہیں، حسنین حیدر نے تیمور اختر کے خلاف مقدمہ واپس لینے کی یقین دہانی کرادی۔ہفتہ کومیئر کراچی وسیم اختر بیٹے کے ہاتھوں زخمی حسنین کے گھر صلح کے لئے پہنچے اور بیٹے کی غلطی تسلیم کرتے ہوئے زخمی نوجوان کے والد محبوب عباسی سے معذرت کرلی۔میئروسیم اختر نے کہاکہ اس طرح کا واقعہ نہیں ہونا چاہئے تھا، ہم سب بھائی ہیں اور بھائیوں کے درمیان غلط ہوا،جس کے بعد حسنین حیدر نے تیمور اختر کو معاف کردیا اور مقدمہ واپس لینے کا وعدہ کرلیا۔یاد رہے گذشتہ روز میئر کراچی وسیم اخترکے بیٹے تیمور اختر کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا تھا، مقدمہ نوجوان حسنین حیدر نے درخشاں تھانے میں درج کرایا تھا۔مقدمے میں جھگڑا، سنگین نتائج کی دھمکیاں اور دیگر دفعات شامل کی گئیں تھیں، مقدمے کے متن میں کہا گیا تھا میئر کراچی کے بیٹے تیمور اختر نے نیو ایئر نائٹ پر تلخ کلامی کے بعد ہوائی فائرنگ کی اور اسلحے کے بٹ سے مار پیٹ کے بعد گن مین کے ساتھ اپنی گاڑی میں بٹھانے کی بھی کوشش کی، حسنین حیدر اور دوستوں کی مزاحمت پر جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دیں۔متاثرہ نوجوان نے کہا کہ تیمور جھگڑتا رہا اور اپنے والد کے نام پر دھمکاتا رہا اور گارڈز کے ساتھ ملکر مجھے تشدد کا نشانہ بنایا، ڈیفنس میں 2 مقام پر مجھے اور میرے دوستوں کو زدو کوب کیا گیا۔مقدمہ درج ہونے کے باوجود پولیس نے میئرکراچی کے بیٹے تیمور اختر کو گرفتار نہیں کیا۔خیال رہے میئرکراچی کابیٹا بیرون ملک جھگڑوں کی وجہ سے سزا اور ڈیپورٹ ہوچکا ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...