”اگرایران نے اب دوبارہ حملہ کیا تو پھر ہم ۔۔“ امریکی صدر ٹرمپ نے دھڑا دھڑ ٹویٹیں کرنا شروع کر دیں

”اگرایران نے اب دوبارہ حملہ کیا تو پھر ہم ۔۔“ امریکی صدر ٹرمپ نے دھڑا دھڑ ...
”اگرایران نے اب دوبارہ حملہ کیا تو پھر ہم ۔۔“ امریکی صدر ٹرمپ نے دھڑا دھڑ ٹویٹیں کرنا شروع کر دیں

  



واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن )امریکہ نے دو روز قبل بغداد میں ایرانی جنرل پر ڈرون حملہ کرتے ہوئے اسے قتل دیا جس پر اب ایران نے بدلہ لینے کا اعلان کرتے ہوئے سرخ جھنڈا لہرا دیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران کے بدلہ لینے کے اعلان پر ایک اور ٹویٹ کر دیا ہے جس میں ان کا کہناتھا کہ ” ایران نے ہم پر حملہ کیا اور ہم نے جواب دیا ، اگر وہ دوبارہ حملہ کریں گے تو میں انہیں مشورہ دوں گا کہ وہ ایسا نہ کریں کیونکہ ہم اس مرتبہ پہلے سے بھی زیادہ سخت حملہ کریں گے جیسا انہوں نے پہلے کبھی نہیں دیکھا ہو گا ۔“

اس سے قبل امریکی صدر نے ٹویٹ کے ذریعے ایران کو بڑی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے 52اہم مقامات امریکی نشانے پر ہیں، اگر ایران نے امریکی تنصیبات پر حملہ کیا تو اس کا جواب دیں گے، امریکی حملہ تیز ہوگا اور انتہائی شدت سے کیا جائے گا۔ٹرمپ نے لکھا کہ ایران امریکی تنصیبات پر حملے کی دھمکیاں دے رہا ہے، ایران نے حملہ کیا تو اس کی تنصیبات پر حملہ کر دیں گے، ان جگہوں میں کچھ ایران اور ایرانی ثقافت کے لیے بہت اہم ہیں، امریکا مزید دھمکیاں سننا نہیں چاہتا۔

واضح رہے کہ امریکی حملوں کے بعد شمالی بغداد میں امریکی فوجی اڈے پر دو راکٹ حملے ہوئے ہیں، جس میں پانچ افراد زخمی ہوئے، امریکی میڈیا کے مطابق راکٹ حملے امریکی فوجیوں پر کیے گئے، جس کے بعد علاقے میں امریکی ہیلی کاپٹروں کی پروازیں شروع ہو گئیں، امریکی سفارت خانے کے داخلی راستے بھی بند کر دیے گئے۔

ادھر پاسداران انقلاب کا کہنا ہے کہ امریکی خوشی کو جلد سوگ میں بدل دیں گے۔ بغداد میں جنرل قاسم سلیمانی کی نماز جنازہ بھی ادا کر دی گئی ہے جس میں عراقی وزیر اعظم سمیت ہزاروں افراد نے شرکت کی۔ عراقی ٹی وی نے حملے کی وڈیو بھی جاری کر دی ہے، امریکی گائیڈڈ میزائل گاڑیوں پر گرنے سے ہر طرف شعلے بھڑک اٹھے، عراق میں گزشتہ روز بھی میزائل حملہ کیا گیا تھا جس میں ایران نواز ملیشیا کے 6 ارکان جان سے گئے تھے۔

مزید : اہم خبریں /بین الاقوامی


loading...