مظلوم کی ڈھال بن کرظالموں کو کیفرکردار تک پہنچا ناپولیس کی اولین ترجیح ہونی چاہئے: آئی جی 

  مظلوم کی ڈھال بن کرظالموں کو کیفرکردار تک پہنچا ناپولیس کی اولین ترجیح ...

  

 لاہور(کر ائم رپو رٹر) انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب انعام غنی نے کہا ہے کہ معاشرے میں رٹ آف اسٹیٹ برقرار رکھنے کیلئے سپر وائزری افسران مثالی کمانڈرز کا کردار ادا کریں اورماتحت افسران و اہلکاروں سے انکی صلاحیتوں کے مطابق نہ صرف بہترین کارکردگی لیتے ہوئے جرائم پیشہ عناصر کا قلع قمع کیا جائے بلکہ مظلوم شہریوں کے دست و بازو بن کر ظالموں اور بدمعاشوں کو کیفرِ کردا ر تک پہنچائیں۔ انہوں نے مزیدکہاکہ سی سی پی اولاہور کو کمانڈر کے ساتھ ساتھ باپ کے کردار کو مدِنظر رکھتے ہوئے پیشہ وارانہ امور کی انجام دہی کو یقینی بنانا ہے جبکہ مظلوم کی ڈھال بن کرظالموں کو کیفرِ کردار تک پہنچانا پولیس فورس کی اولین ترجیح ہونی چاہئے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ سمندر پار پاکستانیوں، بیواؤں اور یتیموں کی املاک ہتھیانے والے بدمعاشوں اور قبضہ گروپوں کے خلاف بلاامتیازکاروائیاں وقت کی اہم ضرورت ہیں انہوں نے مزیدکہاکہ 2021فری رجسٹریشن آف جرائم کو یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ کیسز کے ورک آؤٹ کرنے کی شرح کو بہتر سے بہتر بنا کر جرائم کے سد باب کو یقینی بنایا جا سکتا ہے۔  انہوں نے مزیدکہاکہ انویسٹی گیشن کی کارکردگی کو بہتر بنا کر پولیس کی مجموعی کارکردگی کو بہتر بنایا جاسکتاہے   انہوں نے مزیدکہاکہ میڈیا نمائندگان کے ساتھ بہترین روابط کے ذریعے پولیس کے اچھے کاموں کی تشہیر کروائیں  یہ ہدایات انہوں نے  سنٹرل پولیس آفس میں لاہور پولیس کے سپروائزری افسران کے ساتھ اجلاس کی صدارت کے دوران جاری کیں آئی جی پنجاب نے عوام کی جان و مال کے تحفظ اور پیشہ ورانہ امور میں مزید بہتری بارے احکامات جاری کئے۔آئی جی پنجاب نے سی سی پی ا ولاہورغلام محمود ڈوگر کو ہدایات دیتے ہوئے کہاکہ پہلے جزا پھر سزا کی پالیسی کے تحت فورس کی حوصلہ افزائی اور احتساب کے عمل کو سر انجام دیا جائے  سی سی پی او لاہور غلام محمود ڈوگر نے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ لاہور پولیس آئی جی پنجاب کی جانب سے دی گئی ہدایات پر من و عن عمل کرتے ہوئے بہتر سے بہتر پرفارمنس کا مظاہرہ کرے گی  اجلاس میں ڈی آئی جی آپریشنز اشفاق احمد خان، ڈی آئی جی انویسٹی گیشن شارق جمال سمیت لاہور کے تمام ایس پیز اور ڈی ایس پیز موجو دتھے۔

مزید :

علاقائی -