تیل کے سمگلروں کے خلاف کریک ڈاؤن کا حکم، پی ڈی ایم اپنی موت آپ مر رہی ہے، حکومت کیلئے کوئی خطر ہ نہیں: عمران خان 

  تیل کے سمگلروں کے خلاف کریک ڈاؤن کا حکم، پی ڈی ایم اپنی موت آپ مر رہی ہے، ...

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم کو ہر فورم پر جواب دینے کا فیصلہ کرتے ہوئے ترجمانوں کو اپوزیشن رہنماؤں کے کریشن کیسز اجاگر کرنے کا ٹاسک دیدیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے زیر صدارت پارٹی رہنماؤں کا اجلاس ہوا جس میں عالمی وبا کے خطرات، اس کے تدارک اور ملک کی سیاسی صورتحال پر سیر حاصل گفتگو کی گئی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سینیٹ انتخابات میں اپوزیشن کو بھرپور جواب دیا جائے گا۔وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کوئی بھی معاشرہ احتساب کے بغیر آگے نہیں بڑھ سکتا، احتساب کاعمل جاری رہے گا۔ موجودہ حکومت ترقی کے سفر پر گامزن ہے۔ حکومت کو اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم سے کوئی خطرہ نہیں ہے۔ پی ڈی ایم نے وبا کے دوران عوام کی زندگی سے کھیلنے کوشش کی۔ اپوزیشن کی پوری تحریک این آر او کیلئے ہے جو انھیں کبھی نہیں ملے گا۔وزیراعظم نے ترجمانوں کو معاشی کامیابیاں اجاگر کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ کمزور معیشت کو درست ٹریک پر لگا دیا۔ تمام معاشی اشاریے درست سمت میں ہیں۔ نئے سال میں کارکردگی مزید بہتر کرنے پر توجہ ہوگی وزیراعظم عمران خان  نے کہا ہے کہ حکومت کو پی ڈی ایم سے کوئی خطرہ نہیں، اپوزیشن کی پوری تحریک این آر او کیلئے ہے جو نہیں دوں گا وزیراعظم عمران خان نے  اپوزیشن کو ٹف ٹائم دینے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ پی ڈی ایم فارغ ہوچکی ہے اور اپنی موت آپ مررہی ہے، حکومت کو پی ڈی ایم سے کوئی خطرہ نہیں، ا۔وزیراعظم نے کہا کہ ماضی کی حکومتیں قومی خزانے کو لوٹتی رہیں، موجودہ حکومت ترقی پر گامزن ہے، کمزور معیشت کو درست ٹریک پر لگا دیا ہے، تمام معاشی اعشاریے درست سمت میں ہیں، نئے سال میں کارکردگی مزید بہتر کرنے اور ڈیلیوری پر توجہ ہوگی۔اس سے قبل سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنی ٹویٹ میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ  ریاستی اداروں کو سیاسی مداخلت کے بغیر آزادانہ طور پر کام کرنے کی اجازت ہو تو قوم کو فائدہ ہوتا ہے۔ وزیراعظم نے مثال دیتے ہوئے کہا کہ نیب نے ہمارے دور میں گزشتہ دو سال میں 389 ارب روپے کی وصولی کی، جب کہ اسی نیب نے  2008 سے 2018 کے 10 سالہ دور میں  صرف 104 ارب روپے ریکور کیے، یہ کرپٹ حکمرانوں کے سیاہ دور کے 10 سال تھے۔عمران خان نے بتایا کہ پنجاب اینٹی کرپشن نے ہماری حکومت کے 27 ماہ میں 206 ارب روپے ریکور کیے، کرپٹ حکمرانوں کے ماتحت اینٹی کرپشن نے گزشتہ 10 سالوں میں صرف 3 ارب روپے ریکور کیے تھے، یہ اعشاریے ثابت کرتے ہیں کہ ادارے آزاد ہوں تو بہتر احتساب ہوتا ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے تیل اسمگلنگ میں ملوث عناصر کے خلاف حتمی کارروائی کا فیصلہ کرتے ہوئے پیٹرول پمپ سیل، جائیدادیں ضبط، بھاری جرمانے، گرفتاریوں اور کریک ڈاون کا حکم دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم کی زیر صدارت انسداد اسمگلنگ اقدامات پر اعلی سطح اجلاس ہوا، اعلی سول اور عسکری حکام سمیت متعلقہ اداروں کے نمائندے شریک ہوئے۔ اجلاس میں اسمگل شدہ تیل کی خریدوفروخت پرمبنی رپورٹ وزیراعظم کو پیش کردی گئی، وزیراعظم عمران خان نے ملک میں اسمگل شدہ تیل کی فروخت کا نوٹس لیتے ہوئے گندے دھندے میں ملوث نیٹ ورک کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کرلیا۔ بریفنگ میں بتایا گیا کہ اسمگل شدہ تیل کی فروخت سیمعیشت کو سالانہ 150 ارب کا نقصان ہوا، ملک میں 2094 پیڑول پمپس اسمگل شدہ تیل کی فروخت میں ملوث نکلے۔ وزیراعظم عمران خان نے تیل اسمگلنگ میں ملوث عناصر کے خلاف حتمی کارروائی کا فیصلہ کرتے ہوئے پیٹرول پمپ سیل، جائیدادیں ضبط، بھاری جرمانے، گرفتاریوں اور کریک ڈان کا حکم دیا۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ اسمگلنگ کی وجہ سے ملکی معیشت کو نا قابل تلافی نقصان پہنچ رہا ہے، انسداد اسمگلنگ اقدامات سیحاصل رقم عوام کی فلاح پر خرچ کریں گے۔وزیرِ اعظم عمران خان سے وفاقی وزیرِ دفاع پرویز خٹک نے ملاقات کی جس میں خطے میں امن و امان کی صورتحال پر تفصیلی گفتگو کی گئی۔وزیر اعظم عمران خان سے مشیر برائے پارلیمانی امور بابر اعوان نے ملاقات کی جس میں ملاقات میں ملکی سیاسی صورتحال پر گفتگو کی گئی۔وزیرِ اعظم عمران خان سے صوبائی وزیرِ صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے ملاقات کی جس میں پنجا ب میں ہیلتھ کارڈ کے اجراء پر پیش رفت سے آگاہ کیا۔ وزیر اعظم عمران خان سے چیرمین این ڈی ایم اے لیفٹیننٹ جنر  ل اختر نواز نے ملاقات کی ہے۔پیر کو یہاں اسلام آباد میں ہونے والی اس ملاقات کے دوران چیرمین این ڈی ایم اے نے وزیر اعظم کو کورونا وائرس اور ٹڈی دل کے کنٹرول  کے حوالے سے ریلیف اقدامات سے متعلق تازہ ترین صورتحال  پر  بریفنگ دی۔  

عمران خان

مزید :

صفحہ اول -