ہائی کورٹ: ریفرنس نہ بنانے کیخلاف  دخواست‘ نیب ملتان کو 18 جنوری کیلئے نوٹس

ہائی کورٹ: ریفرنس نہ بنانے کیخلاف  دخواست‘ نیب ملتان کو 18 جنوری کیلئے نوٹس

  

 ملتان (خصوصی رپو رٹر) لاہور ہائیکورٹ ملتان بنچ کے جج مسٹر جسٹس شاہد محمود سیٹھی نے ریفرنس نہ بنانے کے خلاف درخواست پر قومی احتساب بیورو ملتان کو 18 (بقیہ نمبر45صفحہ5پر)

جنوری کے لیے نوٹس جاری کر دیا ہے کہ وہ جواب دیں کہ مقدمے کا اندراج کیوں نہیں کیا جا رہا ہے۔ قبل ازیں عدالت عالیہ میں پٹشنر ظفر اقبال نے وکیل قیصر عباس صابر کے ذریعے موقف اختیار کیا کہ ہمایوں ناصر نامی ڈویلپر نے الناصر سٹی خانیوال کے نام سے ایک ہاوسنگ سکیم میں شہریوں کو پلاٹ الاٹ کیے خریداروں کو بھی پلاٹ ٹرانسفر نہیں کیے گئے جب کہ وہ پوری رقم وصول کر چکے ہیں اس کے علاوہ طاہر عباس پٹواری کے ساتھ مل کر انہوں نے انتقال کی فیس اور دیگر سرکاری ٹیکسوں میں حکومت کو 50 کروڑ روپے کا نقصان پہنچایا۔ سرکاری ریکارڈ میں ردوبدل کی گئی۔ دو ماہ سے پٹشنر کو نیب چکر لگوا رہا تھا تاکہ وہ دلبرداشتہ ہوکر اپنی شکایت واپس لے لیں اخر تنگ آکر اس نے عدالت عالیہ سے رجوع کیا ہے تاکہ قومی مجرم سزا سے بچ نہ سکیں۔

نوٹس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -