مہندی تقریب‘ چھاپہ‘ گرفتاریاں‘ لوگوں کا پولیس پارٹی پر حملہ‘ تشدد

مہندی تقریب‘ چھاپہ‘ گرفتاریاں‘ لوگوں کا پولیس پارٹی پر حملہ‘ تشدد

  

وہاڑی(بیورورپورٹ،نامہ نگار)تھانہ دانیوال کی حدودبھٹہ شادی خان میں مہندی کی تقریب میں ہوائی فائرنگ پرپولیس تھانہ دانیوال نے چھاپہ مارا‘ مہندی کے شرکاء نے مبینہ طورپرپولیس اہلکاروں اور افسران پرتشدد کیا سابق امیدوارقومی اسمبلی رانا صغیر احمد گڈو سمیت متعددافرادگرفتار کرلئے گئے‘ پولیس کی بھاری نفری نے بھٹہ شادی خان کوگھیرے میں لئے رکھا،پولیس پارٹی پر(بقیہ نمبر31صفحہ5پر)

 حملہ کرنے والوں کے خلاف مقدمہ درج کرلیا‘ پولیس تھانہ دانیوال میں درج آیف آئی آر نمبر05/21 کے مطابق تھانہ دانیوال کو گزشتہ رات 15پر اطلاع ملی کہ بھٹہ شادی خاں میں چدھڑ برادری کی مہندی پر رقص اور ہوائی فائرنگ جاری ہے پولیس تھانہ دانیوال نے موقع پر ریڈ کرتے ہوئے ذوالفقار،تنویر،ریاض اور لیاقت نامی شخص سمیت ساونڈ سسٹم و دیگر سامان قبضہ میں لے لیا پولیس پارٹی ملزمان کو گرفتار کرکے واپس جانے لگی تو سابق امیدوار ایم این اے رانا صغیر احمد گڈو کے بھتیجے رانا شہزاد نے اپنے بھائیوں،صہیب،اسامہ،حماد،ساتھیوں،بشارت،آصف،راشد،اسرار و دیگر دس سے پندرہ نامعلوم افراد کے ہمراہ مسلح پسٹل اور سوٹوں کے پولیس پارٹی پر حملہ کردیا مسلح افراد کے تشدد سے اے ایس آئی قیصر منظور سمیت متعدد پولیس اہلکار شدید زخمی ہوگئے واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پورے ضلع کی پولیس نے بھٹہ شادی خاں کے علاقہ کو گھیرے میں لے لیا اور سابق امیدوار ایم این اے رانا صغیر احمد گڈو سمیت متعدد افراد گرفتار کرلئے رانا صغیر کی گرفتاری پر علاقہ مکینوں نے رات گئے لڈن روڈ بلاک کرکے پولیس کے خلاف شدید نعرہ بازی کی کئی گھنٹے علاقہ کا ماحول کشیدہ رہا بعد ازاں رات گئے پولیس تھانہ دانیوال نے رانا صغیر احمد گڈو کو رہا کرتے ہوئے رانا شہزاد،حماد،صہیب،اسامہ،آصف،اسرار،منیر عرف میرو،راشد،بشارت،ساجد عرف ساجی سمیت 15کس نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کرکے ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارنے شروع کردئیے جبکہ سابق امیدوار ایم این اے رانا صغیر احمد گڈو کے دفتر پر پولیس کی جانب سے مبینہ توڑ پھوڑ کے الزام میں رانا گڈو کے حامیوں نے تھانہ دانیوال کے باہر احتجاجی مظاہرہ بھی کیا دن بھر بھٹہ شادی خاں کا ماحول کشیدہ رہا ذرائع کے مطابق رانا صغیر گڈو نے سیشن کورٹ میں مبینہ پولیس گردی کے خلاف مقدمہ کے اندراج کیلئے درخواست دے دی ہے۔

حملہ / تشدد

مزید :

ملتان صفحہ آخر -