بلوچستان میں دہشتگردی کیخلاف شہر شہر مظاہرے‘ دھرنے‘ نعرے بازی

          بلوچستان میں دہشتگردی کیخلاف شہر شہر مظاہرے‘ دھرنے‘ نعرے بازی

  

ملتان (سٹی رپو رٹر)قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے مچھ کے علاقہ گیشتری میں لرزہ خیز واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت شہریوں کے تحفظ میں ہمیشہ ناکام ہوتی ہیقاتل دندناتے پھرتے ہیں بیسیوں قاتلوں کا جھتہ واردات کرکے چلا کیسے گیا؟ان خیالات کااظہارانہوں نے شیعہ علماء کونسل کے ترجمان بشارت قریشی (بقیہ نمبر40صفحہ7پر)

سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ قاتل اتنے طاقتور کیوں ہو گئے ہیں جب چاہیں دہشت گردی کر لیتے ہیں کوئی پوچھنے والا نہیں انہوں نے کہا کہ سفاک قاتلوں کی جانب سے گیشتری میں 11 ہزارہ محنت کشوں کو ہاتھ پاؤں باندھ کر بے دردی سے تیز دھار آلہ سے قتل اور ذبح کرنادرندگی اورسفاکیت کی بد ترین مثال ہے،انسانی حقوق کے اداروں اور مزدور تنظیموں کو اس ظلم کیخلاف ہر سطح پر بھر پور آواز بلند کرنی چاہیے۔علامہ ساجد نقوی کا مزید کہنا تھا کہ سفاک قاتلوں کے خاتمے تک ملک میں حقیقی معنوں میں امن و امان قائم نہیں ہو سکتا۔ قانون نافذ کرنے اور امن و امان قائم رکھنے کے ذمہ دار اداروں کو سفاکیت کے خاتمہ کیلئے مخلصانہ کوششیں کرنا ہونگی۔ انہوں نے کہا کہ تمام مجبوریوں کو بالائے طاق رکھتے ہوئے بے گناہ محنت کشوں کے سفاک قاتلوں کی نشاندہی کرتے ہوئے ان کیخلاف ٹارگٹڈ آپریشن کیا جائے اور سانحہ مچھ کے علاقہ گیشتری میں ملوث عناصر اور ان کے سہولت کاروں کو قانون کے شکنجے میں کس کر انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔ آخر میں علامہ ساجد نقوی نے شہدا کے لواحقین اور ورثا سے اظہار تعز یت کرتے ہوئے کہا کہ غم کی اس گھڑی میں سوگوار خاندانوں کے ساتھ برابر کے شریک ہیں، شہدا کو خراج تح بھسین پیش کیا اور زخمیوں کیلئے جلد صحت یابی کی دعا کی۔ بلوچستان کے علاقے مچھ میں ہزارہ برادری کے قتل ہونے والے گیارہ افراد کی اندوہناک شہادت کیخلاف ملتان میں مجلس وحدت مسلمین اور امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے زیراہتمام پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ اور بعدازاں نواں شہر چوک تک احتجاجی ریلی نکالی گئی۔نواں شہر پہنچ کر شرکاء نے دھرنا دیدیا۔ دھرنے کی قیادت مجلس وحدت مسلمین جموبی پنجاب کے صوبائی سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار نقوی۔علامہ قاضی نادر علوی۔علامہ وسیم معصومی۔سلیم عباس صدیقی۔مہر سخاوت علی۔ حسنین بخاری۔فخر نسیم صدیقی۔آئی ایس او ملتان کے ڈویژنل صدر محمد ثقلین۔عاطف حسین نے کی۔علامہ اقتدار نقوی نے کہا ہے کہ بلوچستان میں وطن کے بیٹوں کے گلے نہیں کاٹے بلکہ ملک کے امن و امان کا گلا کاٹنے کی کوشش کی گئی ہے۔پاکستان اور اسلام کے دشمن ہم پر حملہ آور ہوئے ہیں۔قومی سلامتی کے اداروں کو مزید چوکنا ہونے کی ضرورت ہے۔دشمن اپنی کمین گاہوں سے نکلنا شروع ہو گئے ہیں۔بھارت، امریکہ، اسرائیل اور ان کے اتحادی وطن عزیز کو عدم استحکام کا شکار کر کے ان عالمی تبدیلیوں کو روکنا چاہتے ہیں جن سے ان کے مفادات کو  سنگین خطرہ ہے۔دشمنوں نے اپنے اہداف کا تعین کر رکھا ہے اور موقع کی تاک میں ہے۔علامہ قاضی نادر علوی نے کہا کہ۔مذہبی منافرت پھیلانے میں ناکامی اور سیاسی بحران پیدا کرنے میں بدترین شکست کے بعد دہشت گردانہ کارروائیوں سے مقاصد حاصل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ملت تشیع پر حملے کر کے ملک میں بے چینی پیدا کرنا دشمنوں کے ایجنڈے کا حصہ ہیں۔ہمیں خود بھی محتاط رہنا ہو گا،  اپنے ارد گرد نگاہ رکھیں اور دشمن کی سازشیں تدبر، فہم اور چوکنا رہ کر ناکام بنائی جائیں۔انہوں نے کہا مقتولین کے ورثاء منفی 9 کی سخت سردی میں دو روز سے دھرنا دیے ہوئے ہیں۔حکومت اور مقتدر اداروں کی یہ ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ شرکا دھرنے کے مطالبات پورے کریں۔اگر  کسی حکومتی شخصیت نے ان کی شنوائی نہ کی تو پھر دھرنوں کا یہ سلسلہ پورے ملک تک پھیل جائے گا۔تاریخ شاید ہے کہ شیعہ قوم اپنے اصولی موقف سے کبھی پیچھے نہیں ہٹتی۔آئی ایس او ملتان کے ڈویژنل صدر ثقلین حیدر نے کہا کہ داعش کی طرف سے اس واقعہ کی ذمہ داری قبول کیا جانا اس حقیقت کا بین ثبوت ہے کہ ملک کے اندر عالمی دہشت گرد تنظیموں کے لے پالک موجود ہیں۔جب تک ان کی پناہ گاہوں کا مکمل خاتمہ نہیں ہو جاتا تب تک امن کا حقیقی قیام محض ایک خواب ہی رہے گا۔ دھرنے میں مولانا صابر بلوچ۔مولانا جعفر انصاری سمیت دیگر موجود تھے۔ جبکہ شیعہ علما ء کونسل ملتان کے زیر اہتمام سانحہ مچھ کے خلاف علمدار چوک سورج میانی میں احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جس کی قیادت شیعہ علما ء کونسل کے رہنما علامہ سید کاشف ظہور نقوی نے کی اس موقع پر مولانا عبد الجعفری، علی سجاد نقوی، محمد باقر بلوچ، سجاد حیدری، سمیت دیگر نے شرکت کی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہاہے کہ سانحہ مچھ شیعہ برادری کے خلاف نہیں بلکہ ملک وقوم کے خلاف سازش ہے اس سانحہ میں ملوث افراد انسان کہلوانے کے قابل بھی نہیں ہیں انہوں نے کہاہے کہ پاکستان کی تعمیر و ترقی اور قیام پاکستان کی تحریک شیعہ برادری کا اہم کردار ہے لیکن اس کے باوجود ایک گہری سازش کے ذریعے ہماری کمیونٹی کو شدت کا نشانہ بنانا جاتا ہے جس کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔

مظاہرے/ نعرے بازی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -