روزہ رکھنے سے آنتوں کی صفائی اور معدہ کی اصلاح ہوتی ہے ، اعجاز فاروقی

روزہ رکھنے سے آنتوں کی صفائی اور معدہ کی اصلاح ہوتی ہے ، اعجاز فاروقی

  

لاہور(سٹاف رپورٹر)روزہ جہاں تزکیہ نفس اور روحانی طہارت کا ذریعہ ہے وہاں یہ انسان کی ظاہری اور جسمانی صحت کے لئے بھی نسخہ کیمیا ہے حضرت محمد ﷺ کا ارشاد گرامی ہے کہ روزہ رکھو تاکہ تندرست رہو۔جبکہ طب اسلامی کے علاوہ مغربی معالجین بھی لوگوں کو ہفتہ میں ایک دن فاقہ کی تلقین کرتے ہیں ۔اعصابی تناؤ ،بلڈ پریشر ،شوگر ،تبخیرمعدہ ،موٹا پا،بواسیر اورپیٹ کی بے شمار بیماریاں زیادہ کھانے ہی سے پیدا ہوتی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار ماہر اطباکرام نے گزشتہ روزگفتگو کرتے ہوئے کیا۔ پاکستان طبی کانفرنس کے مرکزی رہنماء پروفیسر حکیم محمد اعجاز فاروقی نے کہا کہ حکیموں اور ڈاکٹروں کا متفقہ فیصلہ ہے اللہ تعالی نے سال میں ایک ماہ کے روزے فرض کرکے ہمیں اپنے معدہ ،جگر ،انتڑیوں ،گردوں اور پٹھوں کو آرام کا سنہری موقعہ فراہم کیا ہے تاکہ بھوک اور پیاس کی گرمی سے ہمارے جسم کے فضلات تحلیل ہوجائیں اور ہم آنے والے گیارہ ماہ تک تازہ دم ہوجائیں سحر و افطار کے وقت مرغن ،تلی ہوئی ،دیر ہضم اور اور بہت زیادہ برف اور برف والی اشیاء کھانے سے پرہیز کریں۔ حکیم محمد احمد سلیمی نے کہا کہ سحری کے وقت چپاتی کے ساتھ گھیا،حلوہ کدو ،گھیاتوری،شلجم ،پالک ،ٹنڈے ،مونگ کی دال اور کالے چنے کا شور با استعما ل کریں ۔

پراٹھا اورنان کے استعمال سے پرہیز کریں ۔افطاری سنت کے مطابق کھجور اور دودھ نیم گرم سے کریں تو دن بھر کی تھکن اور پیاس سے تسکین حاصل ہوگی۔احمد حسن نوری نے کہا کہ افطاری کے وقت سموسے،پکوڑے ،پوری کچوری ،فروٹ چاٹ اور نقصان دہ مشروبات کے استعمال سے پرہیز کرنا چاہیے

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -