مولانا فضل الرحمن اور شجاعت کی ملاقات کی اندرونی کہانی

مولانا فضل الرحمن اور شجاعت کی ملاقات کی اندرونی کہانی

  

اسلام آباد(آئی این پی)جمعیت علماءاسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن اور (ق) لیگ کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین کی چند روز قبل ہونے والی ملاقات کے حوالے سے دلچسپ انکشافات‘ جمعہ کو جے یو آئی (ف) کے ذرائع کے مطابق ملاقات میں چوہدری شجاعت حسین نے مولانا فضل الرحمن کے سامنے جب اپنے دس نکات رکھے تو مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ چوہدری صاحب میں یہ نکات وزیر اعظم کے پاس لے جاﺅں گا اگر انہوں نے یہ سب مان لئے تو پھر کیا ہو گا۔ اس پر چوہدری شجاعت نے اپنے مخصوص انداز میں کہا کہ ” مولانا صاحب فیر کی اسی 10 ہور لے آواں گے“۔ ذرائع کے مطابق اس پر مولانا فضل الرحمن سے شکوہ کرتے ہوئے کہا کہ آپ تو وفاقی حکومت میں جا کر مزے لے رہے ہیں۔ تحریک انصاف کو بھی خیبر پختونخواہ کی حکومت مل گئی اب ہمارے لئے تو باقی صرف ”قادری “ ہی رہ گیا ہے۔ ہم نے بھی تو اپنی سیاست کی دکان چلانی ہے۔ ذرائع کے مطابق اس پر مولانا فضل الرحمن نے چوہدری شجاعت حسین سے مذاق کرتے ہوئے کہا کہ چوہدری صاحب مجھے تو آپ کی دکان چلتی نظر نہیں آتی۔ مولانا فضل الرحمن نے چوہدری شجاعت حسین سے کہا کہ طاہر القادری انتہائی جھوٹا اور مکار شخص ہے۔ آپ اس کا ساتھ تو دے رہے ہیں وقت آنے پر یہ آپ کو بھی بیچنے سے گریز نہیں کرے گا۔

مزید :

صفحہ اول -