تین سالہ سعودی بچی نے روزہ رکھ کرنئی تا ریخ رقم کر دی

تین سالہ سعودی بچی نے روزہ رکھ کرنئی تا ریخ رقم کر دی
تین سالہ سعودی بچی نے روزہ رکھ کرنئی تا ریخ رقم کر دی

  

مکہ المکرمہ(مانیٹرنگ ڈیسک ) روزہ ایک ایسی عبادت ہے جس کا براہ راست تعلق کسی بھی انسان کے کھانے پینے سے ہوتا ہے، مسلمانوں پر روزہ 12 سال کی عمر سے فرض ہوتا ہے لیکن ایک 3 سالہ سعودی بچی سے روزہ رکھ کر ایک نئی تا ریخ رقم کر دی ہے ۔عرب میڈیا کی رپورٹس کے مطابق 3 سال اور 7 ماہ کی مریم راشد کی والدہ عفر آبرو کا کہنا تھا کہ انھیں بہت خوشی اور فخر ہے کہ ان کی بیٹی نے اتنی چھوٹی سی عمر میں روزہ رکھنے کی سعادت حاصل کی ہے، انھوں نے بھی صرف 6 برس کی عمر میں پہلا روزہ رکھا تھا لیکن ان کی بیٹی نے اتنی کم عمری میں روزہ رکھ کر ہمارا سر فخر سے بلندکر دیا ، مریم نے ہم نے کھانے پینے کےلئے کسی چیز کا مطالبہ نہیں کیا ۔ننھی مریم کا اس موقع پر کہنا تھا کہ پہلے پہل تو میں نے والدین کو تھوڑا تنگ کیا لیکن جب والدہ نے مجھے روزے کی اہمیت بارے بتایا تو پھر میں نے روزہ مکمل کیا۔

مزید :

بین الاقوامی -