فحاشی کے خلاف ’گوگل‘ کا قابل تحسین اقدام

فحاشی کے خلاف ’گوگل‘ کا قابل تحسین اقدام
فحاشی کے خلاف ’گوگل‘ کا قابل تحسین اقدام
کیپشن: Google

  

سان فرانسسکو (نیوز ڈیسک) انٹرنیٹ کی آمد کے بعد دنیا میں مختلف فلموں اور حیا سوز تصاویر کا سیلاب آچکا ہے اور نوجوان نسل جنسی مواد کی نشے کی حد تک عادی ہوچکی ہے۔ خوش قسمتی سے ایسے مواد کی تلاش کے سب سے بڑے ذریعے ”گوگل“ نے اس شرمناک طوفان کو کم کرنے کیلئے اقدامات شروع کردئیے ہیں اور پہلے مرحلے میں گوگل نے انٹرنیٹ پر فحش فلموں اور تصاویر کے اشتہارات پر پابندی لگادی ہے۔ گوگل کا کہنا ہے کہ جب انٹرنیٹ پر کوئی فحش مواد کی سرط کرے گا تو اس قسم کا مواد فراہم کرنے والی ویب سائٹوں کے اشتہار نہیں دکھائے جائیں گے۔ جنسی اور فحش فلمیں اور تصاویر دکھانے والے اداروں اور ویب سائٹوں کو بھی گوگل کی طرف سے یہ پیغام بھیج دیا گیا ہے کہ ان کے اشتہارات اب گوگل پر نہیں دکھائے جائیں گے۔ ایک ایل میل میں گوگل نے انتباہ کیا کہ جنسی اعضاءاور جنسی حرکات دکھانے والی فلموں اور تصاویر، کم سن بچوں کی جنسی فلموں اور تصاویر، فحش مساج اور جسم فروشی کے اشتہارات گوگل پر نہیں دکھائے جائیں گے۔ تاہم فی الحال فحش کلبوں، فحش ڈانسروں اور جنسی ہمسفر تلاش کرنے کیلئے استعمال ہونے والی ویب سائٹوں کے اشتہار گوگل پر دستیاب ہوں گے۔ گوگل نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ فحش مواد کی سرچ کرنے پر ویب سائٹوں کی تفصیلات پہلے کی طرح ہی دستیاب ہوںگی، صرف اشتہارات پر پابندی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -