دورہ انگلینڈ: قومی کرکٹ ٹیم کا 2روزہ انٹر سکواڈپر یکٹس میچ آج: مصباح کھلاڑیوں کی فنٹس سے مطمئن

دورہ انگلینڈ: قومی کرکٹ ٹیم کا 2روزہ انٹر سکواڈپر یکٹس میچ آج: مصباح ...

  

ووسٹر(آئی این پی) قومی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی ووسٹر میں 14 روز کے قرنطینہ کے دوران دو،دو روزہ انٹرا اسکواڈ وارم اپ میچز کھیلیں گے۔پہلا پریکٹس میچ آج کھیلا جائے گا میچ کا آغاز صبح گیارہ بجے ہوگا

جبکہ دوسرا میچ 11 جولائی کو کھیلا جائے گا قومی ٹیم کے کھلاڑیوں کے آپس میں میچ کھیلنے کا مقصد بھرپور پریکٹس ہے جس میں اب تک کھلاڑیوں کی جانب سے کی پریکٹس کا بھی اندازہ ہوجائے گا۔7 جولائی کو پاکستان کرکٹ ٹیم تین گھنٹے پر مشتمل ٹریننگ سیشن میں شرکت کریگی۔ یہ سیشن مقامی وقت کے مطابق دوپہر 2 بجے شروع ہوگا۔ آٹھ جولائی کو پاکستان کرکٹ ٹیم تین، تین گھنٹوں پر مشتمل 2 ٹریننگ سیشنز میں شرکت کرے گی دوسرے پریکٹس میچ کے بعد تیرہ جولائی کو پاکستان کرکٹ ٹیم ڈربی روانہ ہوگی دوسری طرفپاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق نے کہا ہے کہ لمبے عرصے کے بعد کھلاڑی ٹریننگ کر رہے ہیں اس کے باوجود مسائل کا سامنا نہیں کرنا پڑا بلکہ کھلاڑی فٹ دکھائی دے رہے ہیں۔ پاکستان کرکٹ ٹیم ان دنوں ووسٹر کے بائیو سیکور ماحول میں انگلینڈ کے خلاف سیریز کی بھرپور تیاریوں میں مصروف ہے۔ قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق کا کہنا ہے کہ کووڈ 19 کی وجہ سے سب ایک لمبے عرصے کے لیے کرکٹ کے میدان سے دور رہے، اب سب کھلاڑی مل کر ٹریننگ کر رہے ہیں سب کو اچھا لگ رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ پہلے تو ایسا محسوس ہو رہا تھا کہ ٹریننگ میں ایک طویل گیپ آگیا ہے تو اس کی وجہ سے مسائل کا سامنا ہو گا لیکن ایسا نہیں ہوا، فٹنس کے لحاظ سے دیکھا جائے تو کھلاڑی فٹ محسوس ہو رہے ہیں جب کہ بیٹنگ اور بولنگ میں بھی ہماری سوچ سے بہت بہتر ہیں۔ ہیڈ کوچ کا کہنا تھا کہ ابھی تو ٹریننگ کا آغاز کیا ہے، تین روز بھرپور ٹریننگ کی ہے، سمجھتا ہوں کہ آگے مزید بہتری آئے گی۔انہوں نے بتایا کہ ووسٹر میں ٹریننگ کے لیے 2،2 سیشنز رکھے گئے ہیں جس کی وجہ سے تمام کھلاڑیوں کو ٹریننگ کے لیے بہت وقت مل رہا ہے جس سے انہیں فائدہ ہو رہا ہے۔مصباح الحق کا کہنا تھا کہ پہلے پریکٹس میچ میں بیٹسمینوں کو پیئر بنا کر کھیلنے کا پلان دیں گے اسی طرح بولروں کے بھی سیٹ بنائیں گے ایک،ایک دن پورے 90 اورز کرے گا اور دوسرا سیٹ دوسرے روز 90 اوورز کرے گا اس سے کھلاڑیوں کو مکمل موقع ملے گا اور وہ ردہم میں آئیں گے۔انہوں نے کہا کہ انگلینڈ کے خلاف سیریز سے قبل پریکٹس میچز بڑی اہمیت کے حامل ہیں اور اگلے میچز میں باقاعدہ الیون بنا کر میچز کھیلے جائیں گے۔مصباح الحق انگلینڈ میں 2 ماہ کے لیے ایک بڑے اسکواڈ کی موجودگی کو پاکستان کرکٹ کے لیے بڑا اہم قرار دے رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ اسکواڈ میں 29 کھلاڑی شامل ہیں، سب اکٹھے ہو رہے ہیں، اسی لیے بڑے اسکوا ڈکا اعلان کیا گیا تھا کہ ایک تو کرکٹ نہیں ہو رہی، پریکٹس کا موقع نہیں مل رہا تو انگلینڈ میں انہیں ایک ساتھ رہنے کا موقع ملے گا، ایک ساتھ ٹریننگ کریں گے تو اس کا فائدہ ہو گا۔ہیڈ کوچ نے مزید کہا کہ ہر کرکٹر کے لیے ایک پلان ترتیب دیا ہوا ہے کہ کیسے آگے لے کر چلنا ہے، اس کا فائدہ اس سیریز کے لیے ہی نہیں ہو گا بلکہ 2 ماہ اکٹھے رہنے سے مستقبل کی کرکٹ کے لیے بھی فائدہ ہو گا، پاکستان نے اگلے 5 سے 6 ماہ میں جو کرکٹ کھیلنی ہے اس کے لیے ایک اچھا یونٹ بن جائے گا۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -