پشاور،ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر 1982 افراد کا چالان

پشاور،ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر 1982 افراد کا چالان

  

پشاور(کرائم رپورٹر) سٹی ٹریفک پولیس پشاور نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر گزشتہ ماہ 1982 افراد کا چالان کیا۔ تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی ٹریفک وسیم احمد خلیل کی ہدایت پر سٹی ٹریفک پولیس پشاور نے شہر کے تمام سیکٹروں میں ناکہ بندیاں کی ہیں جہاں پر شہریوں کو کورونا وائرس سے بچنے سے متعلق آگاہی دی جاتی ہے جبکہ احتیاطی تدابیر پر مشتمل پمفلٹس بھی ان میں تقسیم کئے جاتے ہیں اس دوران سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنیوالوں کے والوں کے خلاف کارروائیاں بھی کی گئی ہیں جس کے تحت دوران سفر ہیلمٹ استعمال نہ کرنے پر 1812 موٹر سائیکل سواروں‘ دوران سفر موبائل فون پر بات کرنے پر 73 اور سیٹ بیلٹ نہ باندھنے پر 97 افراد کا چالان کیا گیا ہے۔ ایس ایس پی ٹریفک نے کہا ہے کہ شہری ٹریفک قوانین کی پاسداری کا خاص خیال رکھیں کیونکہ شہریوں کی چھوٹی غلطی بڑے نقصان کا سبب بن سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہری موٹر سائیکل پر سفر کرتے وقت ہیلمٹ کا استعمال ضرور کریں کیونکہ اکثر اوقات گرنے کی صورت میں موٹر سائیکل سوار ہیڈ انجری کے باعث موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ موٹر کار میں ڈرائیونگ کے دوران سیٹ بیلٹ کا استعمال انتہائی ضروری ہے جس سے حادثات کے وقت قیمتی جانوں کے ضیاع پر قابو پایا جا سکتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہری دوران سفر موبائل فون کے استعمال سے گریز کریں کیونکہ دوران سفر موبائل فون کے استعمال سے توجہ کہیں اور چلی جاتی ہے جس کے باعث ٹریفک حادثات رونما ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شہری ٹریفک قوانین کی پاسداری کرتے ہوئے محب وطن پاکستانی ہونے کا ثبوت دیں اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ تعاون کریں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -