جلد سپیکر قومی اسمبلی کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائیں گے،سعید غنی

جلد سپیکر قومی اسمبلی کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائیں گے،سعید غنی

  

کراچی(آئی این پی) وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی اور پیپلز پارٹی کے رکن قومی اسمبلی عبدالقادر پٹیل نے کہا ہے کہ جلد اسپیکر قومی اسمبلی کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائیں گے،پی ٹی آئی کے وزیر جن کا کام جھوٹ اور الزام تراشیاں ہی رہ گیا ہے، جلد وزارت پورٹ اینڈ شپنگ میں ہونے والی اربوں کے کرپشن پر وائٹ پیپر جاری کیا جائے گا۔ قومی اسمبلی کے فلور پر جھوٹی اور من گھڑت جے آئی ٹی رپورٹ لہرا کر پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت اور ارکان قومی و صوبائی اسمبلی پر الزام لگانے والے اس بے شرم وزیر کو حقیقی جے آئی ٹی رپورٹ کے بعد ان ارکان اور قوم سے معافی مانگنی چاہیے۔ علی زیدی کو کھلا چیلنج دیتا ہوں کہ وہ کسی ٹی وی چینل کے ٹاک شو میں میرے مدمقابل آئیں اور مجھ سے مناظرہ کریں تو انہیں تمام حقائق کا پتہ چل جائے گا۔ قومی اسمبلی میں اسپیکر کا رویہ انتہاہی جاندرانہ ہے اور ان کے خلاف پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ن) تحریک عدم پیش کرنے کا سوچ رہی ہے۔حکومت فوری طور پر کے الیکٹرک کو سرکاری تحویل میں لے اور عوام کو مکمل بجلی کی فراہمی کو یقینی بنائے۔ وہ ہفتہ کو مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے،صوبائی وزیر سعید غنی نے کہا کہ ہم نے پی ٹی آئی کے وزراء کے مطالبے پر عذیر بلوچ کی جے آئی ٹی کو پبلک کردیا ہے اور پیر کے روز یہ محکمہ داخلہ کی آفیشل ویب سائیڈ پر موجود ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ کچھ روز قبل پی ٹی آئی کے ایک چول وزیر جن کا کام صرف جھوٹ اور من گھڑت الزامات لگانا ہے نے اسمبلی فلور پر کھڑے ہوکر ایک جھوٹی جے آئی ٹی رپورٹ ایوان میں لہرا لہرا کر پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت اور ہمارے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی پر الزامات عائد کئے۔ انہوں نے کہا کہ مذکورہ جے آئی ٹی میں ہمارے کسی رکن کا نام نہیں اور بے بنیاد الزامات لگائی گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایوان کے پلیٹ فارم پر الزام لگانے پر ان کو کوئی شرم نہیں ہے کیونکہ اگر انہیں کوئی شرم ہوتی تو ملک کا یہ حال نہ ہوتا اوراگر شرم ان کو ہوتی تو ایسے الزام نہ لگائے جاتے۔ سعید غنی نے کہا کہ مجھ پر الزام لگائے گئے اور پولیس افسر کی توسط سے میرے بھائی کا نام استعمال کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ کسی پولیس افسر کا کام رپورٹ بنانا نہیں ایف آئی آر داخل کرنا ہوتا ہے اور گرفتاری کی جاتی ہے اور اگر ایسا افسر کاروائی نہیں کرتا تو وہ یا تو بزدل ہے یا ان فٹ ہے۔

سعید غنی

مزید :

صفحہ اول -