مہنگائی پر قابو پانے کیلئے ٹاسک فورس قائم کی جائے،کوکب اقبال

مہنگائی پر قابو پانے کیلئے ٹاسک فورس قائم کی جائے،کوکب اقبال

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) مہنگائی کو کنٹرول کرنے کے عملی اقدامات کہیں نظر نہیں آتے- اشیائے صرف اور اشیائے ضرورت کی قیمتیں صارف کی دسترس سے باہر ہوگئی ہیں - سبزیاں، دالیں، مصالحہ جات، انڈوں اور مرغی کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے-کورونا کے سبب بیروزگاری بڑھ رہی ہے- لوگوں کی آمدنی 60 فیصد سے بھی کم ہوگئی ہے- متوسط طبقہ سمیت غربت کی لکیر سے نیچے زندگی گزارنے والوں کی تعداد میں اضافہ ہورہا ہے- یہ بات کنزیومر ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین کوکب اقبال نے ادارۂ شماریات کی حال ہی میں مہنگائی کی شرح میں اضافہ کی رپورٹ پر کیپ کے جائزہ اجلاس میں میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کی- انہوں نے کہا کہ کنزیومر ایسوسی ایشن آف پاکستان گزشتہ کئی مہینوں سے حکومت کی توجہ بڑھتی ہوئی مہنگائی پر دلانے کی کوششیں کرتی رہی ہے مگر افسوس نہ ہی وفاقی حکومت اور نہ ہی صوبائی حکومتوں نے صارفین کو ریلیف پہنچانے کے لئے کوئی عملی اقدامات کئے جس کے نتیجے میں ماہِ جون کے اختتام پر مہنگائی کی شرح پورے ملک میں 8.50 فیصد سے بڑھ کر 10.74 فیصد ہوگئی ہے- کوکب اقبال نے کہا کہ گزشتہ دنوں میں ملک کا بجٹ پاس ہوگیا جو یقینا ماہرینِ معیشت کا تیار کردہ تھا جو ملک کو چلانے کے لئے بجٹ بناتے ہیں - کیا وہ ایک چھوٹی فیملی جس کی آمدنی 20 سے 25 ہزار ہو، اس کو گھر کا بجٹ بھی بنا کر دکھائیں کہ وہ اپنے گھر کو چلانے کے لئے کس طرح کم پیسوں میں اپنی فیملی کو زندگی کی ضرورتیں فراہم کرے-

مزید :

صفحہ آخر -