عثمان کاکڑ موت، بیان قلمبند کرانیوالوں کوکوائف درج کرانے کی ہدایت 

عثمان کاکڑ موت، بیان قلمبند کرانیوالوں کوکوائف درج کرانے کی ہدایت 

  

کوئٹہ(این این آئی)پشتونخواملی عوامی پارٹی کے رہنما و سابق سینیٹر عثمان خان کاکڑ کی موت کی تحقیقات کیلئے قائم جوڈیشل کمیشن نے بیان قلمبند کرانے والوں کو 10جولائی تک اپنے نام ایڈیشنل رجسٹرار بلوچستان ہائیکورٹ ارشد محمود کے پاس درج کرانے کی ہدایت کردی۔حکومت بلوچستان کی جانب سے پشتونخواملی عوامی پارٹی کے رہنما سابق سینیٹر عثمان خان کاکڑ کی موت کی تحقیقات کیلئے بلوچستان ہائیکورٹ کے جج جسٹس نعیم اختر افغان اور جسٹس نذیراحمدلانگو پر مشتمل جوڈیشل کمیشن نے ورثاء و اقرباء سابق سینیٹر عثمان کاکڑ، عوام الناس میں سے کوئی بھی شخص جو اس بارے میں کوئی معلومات رکھتا ہو بشمول قانون نافذ کرنیوالے اداروں کے ملازمین،افسران جن کا کسی بھی صورت کوئی تعلق براہ راست یا بلاواسطہ بصورت انجام دہی فرائض منصبی و دیگر اور تمام متعلقہ اشخاص،ملازمین،افسران،ضلعی انتظامیہ اگر اس معاملے میں کسی بھی قسم کی کوئی بھی معلومات دینا چاہتے ہیں یا اپنا بیان قلمبند کرواناچاہتے ہیں انکو ہدایت کی ہے کہ وہ اپنا نام بمعہ کوائف ایڈیشنل رجسٹرار ہائیکورٹ آف بلوچستان ارشد محمود کے دفتر میں 10جولائی تک درج کرائیں۔

عثمان کاکڑ 

مزید :

صفحہ آخر -