ترقیات کاموں کی رفتار کیساتھ معیار کو بھی یقینی بنایا جائیگا: عثمان بزدار

ترقیات کاموں کی رفتار کیساتھ معیار کو بھی یقینی بنایا جائیگا: عثمان بزدار

  

 لاہور(خصوصی رپورٹ) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے صوبائی وزیر خزانہ ہاشم جواں بخت نے ملاقات کی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے صوبائی وزیر خزانہ کو رواں مالی سال کے لئے بہترین اورعوام دوست بجٹ پیش کرنے پر مبارکباد دی۔ صوبائی وزیر خزانہ نے بجٹ اور سالانہ ترقیاتی پروگرام کی تیاری میں گائیڈ لائن اور بھرپور سپورٹ پر وزیراعلیٰ عثمان بزدار کا شکریہ ادا کیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت صوبے میں معاشی ترقی کو یکساں رفتار سے جاری رکھنے کیلئے ترقیاتی منصوبوں کی بروقت تکمیل کیلئے پر عزم ہے۔ رواں مالی سال کے آغاز کے ساتھ جاری سکیموں کے لیے مختص100 فیصد فنڈز کی فراہمی کو یقینی بنا یا جا رہا ہے۔ محکمہ خزانہ کی جانب سے مالی سال2021-22کے سالانہ ترقیاتی پروگرام میں جاری سکیموں کیلئے فنڈزجاری کر دئیے گئے ہیں اور محکمہ مواصلات و تعمیرات اور متعلقہ محکموں کو بلا تاخیر سکیموں پر کام تیزکرنے کیلئے ہدایات جاری کر دی گئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ پلاننگ اینڈ ڈوپلپمنٹ کے تحت مانیٹرنگ کا موثر میکانزم ترتیب دیا گیاہے۔ ترقیاتی منصوبوں پر ہونے والی پیشرفت کا باقاعدگی سے جائزہ لوں گا۔ ترقیاتی کاموں کی رفتار کے ساتھ معیار کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔ منصوبوں میں معیار اور شفافیت کی چانچ پڑتال کیلئے ڈائریکٹوریٹ جنرل مانیٹرنگ اینڈ ایویلیوایشن کی خدمات لی جائیں گی اور تھرڈ پارٹی آڈٹ کو بھی یقینی بنائیں گے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے مالیاتی نظم و ضبط برقرار رکھنے، غیر ضروری اخراجات میں مزید کمی، بچت اور کفایت شعاری کی پالیسی پر سختی سے عملدرآمد کی ہدایت کی۔ انہوں نے کہا کہ کوویڈ 19 کے چیلنج سے نمٹنے کیلئے محکمہ خزانہ نے موثر حکمت عملی اختیار کی۔ کوویڈ 19سے متاثرہ معیشت کو سہارا دینے کیلئے 56.5 ارب سے زائد کا ٹیکس ریلیف پیکیج دیاہے۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے صوبائی وزیرجیل خانہ جات فیاض الحسن چوہان نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور، سیاسی معاملات اور محکمانہ کارکردگی پر بات چیت کی گئی۔ فیاض الحسن چوہان نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو اپنے محکمے کی کارکردگی سے آگاہ کیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جیل نظام میں اصلاحات لاکر قیدیوں کے لئے آسانیاں پیدا کررہے ہیں۔ قیدیوں کو بھی بنیادی انسانی حقوق حاصل ہیں اور پہلی بار کسی وزیراعلیٰ نے 10سے زائد جیلوں کے دورے کئے اور قیدیوں کے مسائل خودجا کر دیکھے۔ قیام پاکستان کے بعد کسی حکمران نے جیلوں میں جا کر قیدیوں کی صورتحال کا جائزہ نہیں لیا۔ خواتین قیدیوں کے بچوں کا ہر طرح سے خیال رکھا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب کی 7جیلوں میں ملٹی سٹوری بیرکس بنائی جارہی ہیں اور 21جیلوں میں پریزنرز مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم کا آغازہوچکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جیلوں میں قیدیوں کی سہولت کے لئے ہر ممکن اقدام اٹھایاجا رہا ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے جیلوں کی مانیٹرنگ کے نظام کو مزید بہتر بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ فرسودہ جیل مینول کووقت کے نئے تقاضوں کے مطابق تبدیل کیا جائے گا۔جیل مینویل میں تبدیلی کر کے قیدیوں کی زندگیوں میں آسانیاں لائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ قیدی بھی انسان ہیں،انہیں بنیادی حقوق دینے کے لئے پرعزم ہیں۔ پنجاب حکومت نے جیلوں کے نظام میں دور رس اصلاحات کی ہیں۔ نظام میں اصلاحات کا مقصد جیلوں میں قیدیوں کے بنیادی حقوق کا تحفظ ہے۔ 125سال پرانے جیل کے قوانین میں ترامیم لائی جا رہی ہیں۔ ماضی میں جیل اصلاحات پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ اپوزیشن کو عوام کے مسائل سے کوئی سروکار نہیں،یہ لوگ صرف پراپیگنڈے کے ماہر ہیں۔ یہ عناصر پاکستان کے عوام کو گمراہ نہیں کر سکتے۔ صوبائی وزیر جیل خانہ جات فیاض الحسن چوہان نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن سن لے کہ حکومت کھوکھلے نعروں سے جانے والی نہیں۔ پی ڈی ایم کا تیاپانچہ ہوچکا۔ کرپٹ ترین اپوزیشن نااہلوں اور نالائقوں کا سند یافتہ ٹولہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن زدہ تھالی کے چٹے بٹے اب بکھر چکے ہیں۔ یہ عوام کی خدمت کیلئے نہیں بلکہ پیسہ بنانے کیلئے پھر سے اقتدار چاہتے ہیں۔

ملاقات

عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -