کورونا میں سخت لاک ڈاؤن نہ لگانے سے معیشت میں بہتری آئی: فرخ حبیب

کورونا میں سخت لاک ڈاؤن نہ لگانے سے معیشت میں بہتری آئی: فرخ حبیب

  

 فیصل آباد (آئی این پی) وزیر مملکت اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے کہا ہے کہ کوروناوبامیں سخت لاک ڈاون نہ لگانے سے معیشت میں بہتری آئی، ن لیگ کے آخری تین سال میں ترسیلات میں اضافہ نہیں ہوا،پی ٹی آئی کے ایک سال میں ترسیلات زر اور برآمدات کی مد میں 60ارب ڈالرپاکستان آئے، وزیراعظم عمران خان کے اقدامات کے باعث ایکسپورٹ میں ریکارڈاضافہ ہوا ہے،سمندرپارپاکستانیوں نے وزیراعظم پراعتمادکااظہارکیا جس کے باعث ریکارڈ ترسیلات زرملک میں آئیں،سمندر پار پاکستانیوں نے وزیرا عظم عمران خان پر اعتماد کیا ہے،وہ جانتے ہیں کہ عمرا ن خان منی لانڈرنگ نہیں کرتے،ہم آئندہ الیکشن میں اپنی کارکردگی کی بنیاد پر عوام کے پاس جائیں گے۔ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فرخ حبیب نے کہا کہ کوروناکی وجہ سے دنیابھرکی معیشت پراثرپڑا اور بڑی معیشتیں بیٹھ گئیں،وباء میں وفاق پردباوڈالاگیاکہ لاک ڈاون لگادیاجائے، وفاقی حکومت نے مزدورطبقے کاسوچااورلاک ڈاون نہیں لگایا،کوروناوبا ء میں سخت لاک ڈاون نہ لگانے سے معیشت میں بہتری آئی،وزیراعظم نے مخالفت کے باجودسمارٹ لاک ڈاون کی پالیسی اپنائی۔ وزیر مملکت نے کہا کہ جو خود کو بہت اہل سمجھتے تھے و ہ آج لندن بھاگے ہوئے ہیں،ملک سے بھاگ جانے والوں کے دور میں ملکی برآمدات 24ارب ڈالر تھیں،یہ بات خوش آئند ہے کہ کورونا کے باوجود ملکی ایکسپورٹ میں ریکارڈ اضافہ ہوا،ہماری برآمدات31ارب ڈالرہیں،پاکستان کی تاریخ میں کبھی31ارب ڈالرکی برآمدات نہیں ہوئیں۔ فرخ حبیب نے مزید کہا کہ پہلی بارایساہورہاہے کہ ڈالرملک سے جانے کی بجائے ملک میں آرہے ہیں،4732ارب روپے کی ریکارڈٹیکس کلیکشن ہوئی،60ارب ڈالربرآمدات اورترسیلات زرکی مدمیں آئے۔

فرخ حبیب 

مزید :

صفحہ آخر -