سرمایہ کاروں کو سہولیات فراہم نہ کر سکے ، وزیر اعظم نے اعتراف کرلیا

سرمایہ کاروں کو سہولیات فراہم نہ کر سکے ، وزیر اعظم نے اعتراف کرلیا
سرمایہ کاروں کو سہولیات فراہم نہ کر سکے ، وزیر اعظم نے اعتراف کرلیا

  

گوادر( ڈیلی پاکستان آن لائن ) وزیر اعظم عمران خان نے ملک بھرمیں سرمایہ  کاروں کو سہولیات فراہم نہ کر سکنے کا اعتراف کر لیا ، وزیر اعظم نے کہا کہ ویتنام ، کمبوڈیا اور بنگلہ دیش جیسے ممالک سرمایہ کاروں کو بہترین سہولیات فراہم کر رہے ہیں جس کی وجہ سے ان کے ملک میں سرمایہ کار دلچسپی لے رہے ہیں ۔

گوادر میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ 1960کی دہائی میں پاکستان تیزی سے ترقی کر رہاتھا ، آج کے ایشیئن ٹائیگرز اس وقت پاکستان کی طرف دیکھتے تھے پھر ہم نے غلطیاں کیں اور سزا بھگتی، ہم نے بلوچستان کو نظر انداز کیا ۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ہم چینی سرمایہ داروں سمیت دیگر سرمایہ داروں کو بہترین سہولیات فراہم کریں گے ، ہم سرمایہ کاروں کیلئے ون ونڈو آپریشن شروع کرنے جا رہے ہیں ، کم از کم میری حکومت سرمایہ داروں کو بہترین سہولیات فراہم کرے گی، سہولیات کے بعد سرمایہ کاروں کی آمد کی مثال ایسے ہی ہے جیسے شہد کی جانب مکھیاں لپکتی ہیں ۔ ماضی میں سرمایہ داروں کو سہولیات نہیں دی گئیں بلکہ سرمایہ داروں کو مشکلات پیش آئیں ۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان بڑا عظیم ملک بننے جا رہا ہے ، براوقت آتے ہی لوگ مایوس ہو جاتے ہیں ، میں خوش قسمت پاکستانیوں میں سے ہوں جنہوں نے ملک کو تیزی سے آگے جاتے دیکھا ہے ۔ ہم گوادر میں مچھیروں کیلئے بڑا زبردست پروگرام بنایا ہے جو ان کے ماہی گیری کے نظام کو جدید شکل میں ڈھالے گی ۔

مزید :

اہم خبریں -