نوجوان لڑکی کار حادثے میں جاں بحق، بوائے فرینڈ زخمی ،پھرتحقیقات کے دوران ایسا ہولناک انکشاف کہ سن کو آدمی دنگ رہ جائے

نوجوان لڑکی کار حادثے میں جاں بحق، بوائے فرینڈ زخمی ،پھرتحقیقات کے دوران ...
نوجوان لڑکی کار حادثے میں جاں بحق، بوائے فرینڈ زخمی ،پھرتحقیقات کے دوران ایسا ہولناک انکشاف کہ سن کو آدمی دنگ رہ جائے
سورس: Facebook/nicole.hasselmann

  

اوٹاوا(مانیٹرنگ ڈیسک) کینیڈا کے شہر وینکوور میں 16نومبر 2018ءکو ایک کارحادثے میں ایک خاتون کی ہلاکت ہو گئی تھی جبکہ اس کا پارٹنر شدید زخمی ہو گیا تھا تاہم عدالت میں اس واقعے کے متعلق ایسا ہولناک انکشاف کیا گیا کہ سن کر ہی آدمی وحشت زدہ رہ جائے۔

 ڈیلی سٹار کے مطابق حادثے میں زخمی ہونے والا یہ شخص جین پیپل اورہلاک ہونے والی اس کی گرل فرینڈ نکول پورسیلو تھی۔ ان کی گاڑی سٹریٹ لائٹ کے کھمبے سے ٹکرا کر الٹ گئی تھی۔ جین گاڑی کے اندر ہی پھنسا ہوا تھا تاہم نکول کی لاش چند میٹر کے فاصلے پر پڑی تھی۔ 

نکول کی لاش کا پوسٹ مارٹم کرتے ہوئے ڈاکٹروں نے دیکھا کہ اس کے جسم پر کارحادثے سے آنے والے زخم بھی تھے مگر بے شمار زخم کسی تیز دھار آلے کے تھے۔ جب ان کی گنتی کی گئی تو 47بہت گہرے زخم تھے جوخنجر وغیرہ سے لگائے گئے تھے۔ گزشتہ دنوں پولیس نے عدالت میں ایک رپورٹ پیش کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ درحقیقت جین پیپل نے نکول کو گھر میں چھری کے وار کرکے قتل کر دیا تھا اور پھر اس کی لاش گاڑی میں لے کر جا رہا تھا جب حادثہ پیش آ گیا۔

پولیس کو جین پیپل کے فون سے ایک ویڈیو بھی ملی جو عدالت میں چلائی گئی۔ اس ویڈیو میں ایسی سفاکیت دکھائی گئی تھی کہ دیکھنے والے آنکھیں بند کرنے پر مجبور ہو گئے۔ ویڈیو میں جین پیپل، نکول کے چھری کے وار کرکے شدید زخمی کرتا ہے اور پھر اسے آہستہ آہستہ سسک سسک کر مرنے کے لیے چھوڑ دیتا ہے اور خود اس کے مرنے کی ویڈیو بنانی شروع کر دیتا ہے۔ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ شدید زخمی حالت میں نکول اس درندے سے بچنے کی آخری کوششیں کرتی ہے مگر اسے اس قدر زخم آ چکے ہوتے ہیں کہ وہ کچھ نہیں کر پاتی۔

 اس کے جسم سے بتدریج خون بہتا چلا جاتا ہے اور بالآخر وہ موت کے منہ میں چلی جاتی ہے۔ رپورٹ کے مطابق جن پیپل رئیل اسٹیٹ ایجنٹ کے طور پر کام کرتا تھا جبکہ نکول ٹیمپلیٹن سکینڈری سکول میں سپورٹ ورکر تھی۔رپورٹ کے مطابق عدالت کی طرف سے جین پیپلز کا سفاکانہ جرم ثابت ہونے پر اسے عمر قید کی سزا سنائی گئی ہے، تاہم وہ 15سال بعد ضمانت پر رہا ہو سکتا ہے۔نکول کی فیملی کا کہنا ہے کہ یہ سزا مجرم کے جرم کی نسبت بہت کم ہے۔ نکول کی والدہ جوئی کا کہنا تھا کہ ”ملک میں انصاف نام کی کوئی چیز موجود نہیں ہے۔“

مزید :

بین الاقوامی -