اغواء برائے تاوان مقدمہ،ملزمہ کی ضمانت بعد از گرفتاری منظور، رہائی کا حکم

اغواء برائے تاوان مقدمہ،ملزمہ کی ضمانت بعد از گرفتاری منظور، رہائی کا حکم

  

 ملتان ( خصو صی   رپورٹر  ) لاہور ہائی کورٹ ملتان کے دو ججز  پر مشتمل ڈویژن بنچ نے اغوا برائے تاوان کے مقدمہ میں ملوث خاتون ثریا بی بی کی ضمانت بعد از گرفتاری(بقیہ نمبر41صفحہ6پر)

 منظور کرتے ہوئے اسے دو دو لاکھ دوپے کے دو مچلکوں  پر رہا کرنے کا حکم دیا۔بتایا گیا کہ گل خان وغیرہ نے ایک  چھوٹے بچے کو اغوا کرلیا۔بعد ازاں اس نے ایک لاکھ روپے تاوان کا مطالبہ کیا۔اور پولیس نے اسے تاوان وصول کرتے ہوئے دھرلیا۔بعد ازاں اس کی نشاندہی پر بچے کو سلطان۔اکبر کے گھر سے برآمد کرلیا اور سلطان کی  بیوی ثریا بی بی کو بھی حراست میں لیلیا۔ملزمہ کے وکیل سردار ظفراحمد خان نے موقف اختیار کیا کہ ان کی موکلہ نے بچہ اغوا کیا نہ اس نے تاوان طلب کیا تھا  اسے صرف گھر میں موجود ہونے کی وجہ گرفتار کیا گیا۔ اصل ملزمان چار ماہ سے جیل میں ہیں۔مدعی گل امیر خان نے 12 فروری کو اپنے چار سالہ بیٹے صدام خان کو تاوان کے لیے اغوا کرنے کا مقدمہ نمبر 257/22 پولیس تھانہ سیتل ماڑی کو درج کرایا تھا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -