'اگر مجھے کچھ ہوگیا تو ویڈیو میں سب سامنے آجائے گا، عمران خان نے اپنا بیان پھر دہرا دیا

'اگر مجھے کچھ ہوگیا تو ویڈیو میں سب سامنے آجائے گا، عمران خان نے اپنا بیان ...
'اگر مجھے کچھ ہوگیا تو ویڈیو میں سب سامنے آجائے گا، عمران خان نے اپنا بیان پھر دہرا دیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ ایک ویڈیو بنا کرمحفوظ جگہ پر رکھی ہوئی ہے، اگر مجھے کچھ ہوگیا تو ویڈیو میں سب سامنے آجائے گا، قوم کو بتائیں گے کہ ذمہ دار کون ہے؟ان کا کہنا تھا کہ  چوروں کا نظریہ پیسہ ہے، سازش کرنے والوں کو عوام قبول نہیں کریں گے، ان لوگوں کو موقع ملے تو اسرائیل کو بھی تسلیم کر لیں، یہ کشمیریوں کی قربانیوں کو نظراندازکر کے بھارت سےدوستی کرلیں گے ، یہ امریکہ کواڈے بھی دیں گے اورکسی نئی امریکی جنگ میں پڑجائیں گے۔

ایک ویڈیو بیان نے انہوں نے کہا کہ  پاکستان میں 5 جولائی کو مارشل لا لگا کر ذوالفقار علی بھٹو کی حکومت ختم کی گئی، امریکہ ذوالفقار علی بھٹو کی حکومت سے خوش نہیں تھا، امریکہ خوش نہیں تھا کہ پاکستان ایک آزاد خارجہ پالیسی بنائے، ذوالفقارعلی بھٹو بھی پاکستان کو آزاد خارجہ پالیسی کی طرف لے جا رہےتھے۔

عمران خان نے کہا کہ آج وہ لوگ مسلط کیے گئے ہیں جن پر اربوں روپے کرپشن کے کیسز چل رہے ہیں، ان لوگوں نے 30 سال کے دوران صرف منی لانڈرنگ کی ہے، دنیا بھر میں آصف علی زرداری کو مسٹرٹین پرسنٹ کہا گیا، نواز شریف کی کرپشن پر فلمیں بنی ہوئی ہیں، ان کا صرف ایک مقصد تھا کسی طرح این آر او مل جائے۔ انہوں نے دعویٰ کیا ہے کہ ہماری حکومت میں ملکی معیشت بہتری کی طرف جا رہی تھی، موجودہ حکومت نے مہنگائی کے تمام ریکارڈ توڑ دیے ہیں۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ ہماری حکومت میں معیشت بہتری کی طرف جارہی تھی، ہمارے دور میں ٹیکس کلیکشن میں ریکارڈ اضافہ ہورہا تھا، کورونا کے دوران پاکستان میں سب سے زیادہ روزگار فراہم کیا گیا، ان لوگوں نے ہماری حکومت گرانے کے لیے این آر او حاصل کیا، ہمارے دور میں آئی ٹی کے شعبے میں ریکارڈ ترقی ہوئی۔

مزید :

قومی -