بھارت کو پھر آئی ایس آئی کا ’بخار ‘ چڑھ گیا

بھارت کو پھر آئی ایس آئی کا ’بخار ‘ چڑھ گیا
بھارت کو پھر آئی ایس آئی کا ’بخار ‘ چڑھ گیا

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) ہندوستان نے پاکستان کی انٹیلی جنس ایجنسیز پر الزام عائد کیا ہے کہ کہ وہ سرحد پار انڈین پنجاب میں دہشت گرد حملے کرنے کے لئے جنگجو بھرتی کرکے ان کی تربیت کررہی ہیں۔انڈین وزیر داخلہ سشیل کمار شندے نے کہا ہے کہ پاکستان کی انٹر سروسز اینٹیلی جنس (آئی ایس آئی) سکھ عسکریت پسند رہنماو¿ں پر دباو¿ ڈال رہی ہے کہ وہ انڈین پنجاب اور دوسری انڈین ریاستوں میں حملے کریں۔ انہوں نے بتایا کہ سکھ عسکریت پسندی کے حوالے سے کچھ اہم پیش رفت ہوئی ہے، اس کے پاکستان میں رہنے والے کمانڈرز پر آئی ایس آئی کی طرف سے آئی ایس آئی کے دہشت گرد پلان کے مطابق انڈین پنجاب اور انڈیا کے دوسرے حصّوں میں کارروائیاں بڑھانے کے حوالے سے دباو بڑھایا جا رہا ہے۔ سکھ نوجوانوں کو پاکستان میں آئی ایس آئی کے مراکز میں دہشت گردی کی تربیت دی جا رہی ہے۔شندے نے یہ دعویٰ پچھلے سال انڈین پولیس کی جانب سے بھاری مقدار میں ہتھیاروں اور گولہ بارود کی برآمدگی کے حوالے سے کیا اور شبہ ظاہر کیا گیا تھا کہ یہ اسلحہ اور گولہ بارود سرحد پار پاکستان سے سمگل کیا گیا تھا۔شندے نے کانفرنس کو مزید بتایا کہ امریکہ اور یورپ میں مقیم سکھ نوجوانوں کو بھی ترغیب دی جا رہی ہے کہ وہ پاکستان کا دورہ کریں تا کہ انہیں دہشت گردی کی تربیت دی جا سکے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -