ملکی ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ کرپشن ہے ختم کر کے د م لیں گے : چیئر مین نیب

ملکی ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ کرپشن ہے ختم کر کے د م لیں گے : چیئر مین ...
 ملکی ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ کرپشن ہے ختم کر کے د م لیں گے : چیئر مین نیب

  


اسلام آباد (اے پی پی) قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین قمر زمان چوہدری نے کہا ہے کہ بدعنوانی تمام برائیوں کی جڑ ہے اور قومی احتساب بیورو نے تمام اشکال اور اقسام کی بدعنوانی کے خاتمے کا عزم کر رکھا ہے ، نیب اپنے تمام وسائل بروئے کار لاتے ہوئے بدعنوانی سے آہنی ہاتھوں سے نمٹنے اور انہیں جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کا تہیہ کر رکھا ہے‘ قومی احتساب بیورو نے ہر قسم کی بدعنوانی کے خلاف عدم برداشت کی پالیسی اختیار کر رکھی ہے جو کہ ملکی ترقی اور خوشحالی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے اور جس نے میرٹ کی دھجیاں اڑاتے ہوئے مستحق افراد کو ان کے جائز حق سے محروم کر رکھا ہے‘ بدعنوانی نہ صرف اقتصادی ترقی کی راہ میں رکاوٹ ہے بلکہ ترقیاتی منصوبوں میں تاخیر کا بھی باعث ہے کیونکہ بدعنوانی اور بدعنوان عوامل سے کمائی گئی دولت چند ہاتھوں میں مرکوز ہو جاتی ہے۔ گزشتہ روز یہاں جاری بیان کے مطابق چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے کہا کہ نیب کی انسدادبدعنوانی کی کوششوں کے باعث قومی و عالمی اداروں نے کرپشن کے خاتمہ کیلئے پاکستان کی درجہ بندی میں نمایاں بہتری ظاہر کی ہے، نیب پاکستان کو بدعنوانی سے پاک کرنے کیلئے پیشہ وارانہ مہارت، شفافیت اور میرٹ کیلئے اپنا قومی فرض ادا کرنے کیلئے پرعزم ہے، مانیٹرنگ اینڈ ایویلویشن نظام سے نیب افسران کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے اور مقدمات کو بروقت نمٹانے میں مدد ملے گی،قومی احتساب بیورو (نیب) نے عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولت فراہم کرنے، شکایات کے آسان اندراج اور تیزی سے مقدمات نمٹانے کیلئے سٹیزن فرینڈلی نیب کے نام سے نیا نظام وضع کیا ہے، یہ نظام شکایات کی رجسٹریشن، شکایات سے متعلق معلومات اور مخصوص نشاندہی نمبر پر مبنی ہے جس کا مقصد نیب میں بدعنوان عناصر کے خلاف درج کرائی جانے والی شکایات کے حل اور شہریوں سے رابطہ کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا مؤثر استعمال یقینی بنانا ہے۔ چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری کی زیر صدارت نیب ہیڈ کوارٹرز میں ایک اجلاس ہوا۔ چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے اپنا عہدہ سنبھالنے کے بعد شہریوں کی ان کی شکایات کے حل اور رسائی کیلئے سٹیزن فرینڈلی نیب کے نام سے نیا اقدام کیا جس کا مقصد شہریوں کے ساتھ بہتر رابطہ اور ان کی بدعنوان عناصر کے خلاف شکایات سے متعلق مزید معلومات حاصل کرنا ہے۔ چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے کہا کہ نیب کو بدعنوانی کی روک تھام اور بدعنوان عناصر سے لوٹی گئی رقم وصول کرنے کیلئے قائم کیا گیا جوکہ شکایات کی بنیاد پر کارروائی کرتا ہے ،2014نیب میں اصلاحات اور بحالی کا سال تھا۔ انہوں نے کہا کہ مانیٹرنگ اینڈ ایویلوایشن نظام کا مقصد نیب میں نتائج پر منظم طریقے سے عملدرآمد کرنا ہے اورپروگراموں کے اثرات کا اندازہ لگانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹرانسپرنسی انٹر نیشنل کی کرپشن پرسپشن انڈیکس (سی پی آئی) کی حالیہ رپورٹ میں پاکستان126ویں سے 116ویں نمبر پر آگیاہے ۔ پاکستان نے نیب کی کوششوں سے یہ کامیابی حاصل کی ہے، انہوں نے کہا کہ عالمی اقتصادی فورم اور مشعل پاکستان کے مطابق پاکستان کی عالمی مسابقتی انڈیکس میں پاکستان کی درجہ بندی 126سے 122کی ہے ، نیب کی کوششوں کی وجہ سے یہ بڑی کامیابی حاصل ہوئی ہے ۔

مزید : صفحہ اول